اسلام آباد: بجلی چوری پکڑنے کیلئے جانیوالے 2 اہلکار قتل، واپڈا ورکرز یونین کا دھرنا

اسلام آباد (خبرنگار) اسلام آباد الیکٹرک سپلائی کمپنی (آئیسکو) کے دو اہلکاروں کو بجلی چوری کی چیکنگ کے دوران نئی آبادی سوہان میں گولیاں مار دی گئیں، دونوں موقع پر جاں بحق ہو گئے۔ آئیسکو ایم اینڈ ٹی کے ٹیسٹ انسپکٹر انور زادہ اور ترلائی سب ڈویژن کے لائن مین عنصر ودود گذشتہ روز ایکسپریس وے پر واقع نئی آبادی سوہان گائوں میں میٹر چیک کرنے گئے جہاں مبینہ طور پر ایک پلاسٹک فیکٹری میں بجلی چوری پکڑے جانے پر نامعلوم افراد نے ان پر حملہ کر دیا اور دونوں اہلکاروں کو سر پر گولیاں مار کر قتل کر دیا۔ تھانہ شہزاد ٹائون نے واقعہ کی ایف آئی آر درج کر لی۔ اطلاع ملنے پر آل پاکستان واپڈا ہائیڈرو الیکٹرک ورکرز یونین (سی بی اے) کے عہدیداران اور سینکڑوں کارکن فیڈرل گورنمنٹ سروسز ہسپتال (پولی کلینک) میں جمع ہو گئے جہاں دونوں میتیں لائی گئی تھیں۔ ہزاروں آئیسکو ملازمین نے یونین کے ریجنل چیئرمین جاوید اقبال بلوچ اور دیگر عہدیداروں کی قیادت میں ہسپتال کے سامنے دھرنا دیا اور دوہرے قتل کی سنگین واردات کے خلاف شدید نعرے بازی کی اور ملزمان کی فوری گرفتاری اور ان کے خلاف انسداد دہشت گردی ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کرنے کا مطالبہ کیا۔ مظاہرین نے سڑک بلاک کر دی اور دونوں میتیں اٹھا کر پریس کلب تک ریلی نکالی اور زبردست احتجاج کیا ۔ اس موقع پر آئی جی اسلام آباد طاہر عالم اور ایس پی سٹی محمد رضوان کی جانب سے ملزمان کے خلاف فوری کارروائی کی یقین دہانی پر آئیسکو ملازمین نے احتجاج ختم کر دیا۔ بعدازاں لائن مین عنصر ودودکی لاش اس کے آبائی شہر نوشہرہ روانہ کر دی گئی جبکہ ٹیسٹ انسپکٹر انور زادہ کی لاش شالے ویلی چوہڑ میں مرحوم کے لواحقین کے حوالے کر دی گئی۔