عمران خان کو نئی کہانی پر بھی شرمندگی کا سامنا کرنا پڑا‘ پتلی گلی سے بھاگنے نہیں دینگے‘ ہتک عزت کا دعویٰ کرینگے‘ مریم

اسلام آباد (وقائع نگار خصوصی) وزیر مملکت برائے اطلاعات و نشریات مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہعمران خان نئی کہانی لے کر آئے مگر دوبارہ ان کو شرمندگی کا سامنا کرنا پڑعمران خان کو ایک مرتبہ پھر مایوسی ہوگی۔ عمران خان کو پتلی گلی سے بھاگنے نہیں دیں گے،،انہوں نے 10 ماہ تک شور مچا کر ملک میں انتشار پھیلایا اور اب پاناما کو بھولنے کی بات کرتے ہیں، پی ٹی آئی چئیرمین کہتے ہیں پانامہ لیکس کو بھول جائو، اب وہ پانامہ کو بھول سکتے ہیں لیکن ہم نہیں بھول سکتے، ہم ان پر ہتک عزت کا دعوی ٰکریں گے۔ سپریم کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو میں انہوں نے کہا اب تک جتنی کارروائی ہوئی ہے اس میں حیران کن بات یہ ہے کہ پی ٹی آئی کا موقف تبدیل ہو گیا ہے،وہ کہہ رہے ہیں کہ پانامہ پیپر کو بھول جائوں اور ایک طرف رکھ دیں اور وزیراعظم کی قومی اسمبلی تقریر جس میں انہوں نے قوم سے جھوٹ بولا ہے اس پر فوکس کیا جائے ۔عمران خان عدالت میں پانامہ لیکس کا کیس لڑنے آئے تھے جس کا وزیراعظم سے کوئی تعلق نہیں تھا اور یہی موقف پاکستان مسلم لیگ(ن) کا ہے۔مریم اورنگزیب نے کہا کہ ایک جھوٹی کہانی کو مزید جھوٹ بول کر ثابت نہیں کیا جا سکتا ہے۔ یہ بات عمران خان کو مان لینا چاہیے یہ عدالت ثبوتوں کے اوپر فیصلے سناتی ہے مگر عمران خان کوعادت ہے کہ وہ عدالت کے باہر عدالت لگائیں اس میں جھوٹ بولیں اور پاکستان کی تیسری دفعہ منتخب وزیراعظم کو بدنام کرے۔ محمد نواز شریف پاکستان کے تیسری مرتبہ منتخب ہونے والے وزیراعظم ہیں اور یہ اس لیے ہیں کہ ان کی سیاست صرف سچائی اور پاکستانی قوم کی خدمت ہے ان کی سیاست جھوٹ اور احتجاج کی کی سیاست پر مبنی نہیں ہے۔عمران خان پتلی گلی سے بھاگنے کی کوشش کر رہے ہیں مگر جانے نہیں دیا جائے گا کیونکہ پاکستان میں کسی کو بد نام کرنے کے خلاف قانون موجود ہیں اور پچھلی مرتبہ ہم نے آپ کی نادانی کی وجہ سے آپ کو معاف کر دیا کہ ابھی آپ نے سیاست میں قدم رکھا ہے مگر عمران خان کو جھوٹ بولنے کی عادت پڑ گئی ہے اب آپ کو ہتک عزت کے قوانین کا سامنا کرنا پڑے گا۔