تھائی لینڈ نے پی آئی اے سمیت پاکستانی ائرلائنز پر پابندی لگا دی، طیارے بھی ناکارہ قرار

کوالا لمپور ( آن لائن)تھائی لینڈ حکومت نے پاکستان مخالف اقدامات کے تحت پاکستان ٹو تھائی لینڈ پی آئی اے سمیت تمام پاکستانی ایئر لائنز اور پاکستانی مسافروں پر پابندی عائد کر دی۔ پاکستان سے دہشت گردوں، منشیات اور انسانی سمگلروں کی تھائی لینڈ میں سرگرمیوں کے الزامات عائد کئے گئے ہیں۔ پی آئی اے کے جہازوں کو بھی ناکارہ قرار دیا گیا، پاکستان سے تھائی لینڈ آنے والے مسافروں کو جیلوں میں بند کرکے ڈی پورٹ کیا جانے لگا۔ وزیراعظم میاں نواز شریف کا  نومبر 2013ء کادورہ تھائی لینڈ بھی کارگر ثابت نہ ہوا، تھائی حکومت کی اسلام مخالف سرگرمیوں کے پیش نظر امیگریشن حکام نے سینکڑوں مسلمانوں کو پکڑ کر جیلوں میں بند کر دیا، تھائی لینڈ میں موجود ہزاروں پاکستانیوں کا مستقبل تباہ ہونے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے۔ حکومت پاکستان کی طرف سے تاحال کوئی احتجاج سامنے نہ آ سکا۔ ملائیشیا میں معتبر ذرائع کے مطابق تھائی لینڈ کی حکومت نے پاکستان سے دہشت گردوں، منشیات فروشوں اور انسانی سمگلروں سمیت دیگر جرائم میں ملوث افراد کو تھائی لینڈ کی سرزمین پر پہنچانے کے سنگین الزامات عائد کرتے ہوئے پی آئی اے سمیت تمام پاکستانی ایئر لائنز پرپابندی عائد کر دی ہے، حکومتی اقدامات کے تحت  اگر کسی مسافر پاکستانی ایئر لائنزکے ذریعے تھائی لینڈجانا درکار ہوتو وہ پی آئی اے یا دیگر ایئر لائنز کی بجائے صرف تھائی ایئر لائنز کے ذریعے پاکستانی ایئرلائیز کا ٹکٹ لیکر تھائی لینڈ جائیگاجبکہ اسے لے جانیوالا طیارہ تھائی ایئر لائن کا ہوگا، تھائی لینڈ کے حکومتی ذرائع کے مطابق پاکستانی ایئرلائنزکے ذریعے کئی عسکریت پسند ، انسانی اسمگلرز اور منشیات فروشوں کی تھائی لینڈ میں آمد میں اِضافہ ہوا ہے۔ ذمہ دار ذرائع نے ’’آن لائن‘‘ کو بتایا کہ تھائی لینڈ آنے والے 20فیصد پاکستانیوں کوکو تھائی لینڈ میں اِنٹری دی جاتی ہے جن میں حکومتی اعلیٰ شخصیات یا ادھیڑ عمر کے افراد شامل ہیں،قبل ازیں تھائی لینڈ ک امیگریشن نے یہ الزام لگایا تھا کہ پاکستان سے آنے والے کئی پاکستانی مشکوک ہوتے ہیں جس وجہ سے کئی پاکستانیوں کو تھائی لینڈ آمد کے بعد 10 سے 15 دن جیل میں رکھ کر واپس پاکستان بھجوا دیا جاتا ہے حالانکہ اُن کے پاس ویزہ اور تمام سفری دستاویزات بھی موجود ہوتے ہیں۔