کراچی:2 رینجرز اہلکاروں‘ ایکسائز کانسٹیبل سمیت 4 افراد جاں بحق

کراچی:2 رینجرز اہلکاروں‘ ایکسائز کانسٹیبل سمیت 4 افراد جاں بحق

کراچی/ دولت پور/ نواب شاہ (کرائم رپورٹر+ نامہ نگاران) کراچی میں ٹارگٹ کلنگ کے واقعات میں رینجرز کے 2اہلکار اور محکمہ ایکسائز کے ایک کانسٹیبل سمیت 4افراد جاں بحق ہو گئے جبکہ کراچی سے آزاد کشمیر جاتے ہوئے ائرفورس کے فلائٹ لیفٹیننٹ وقاص اختر اور کیپٹن بلال کو اغوا کر لیا گیا تاہم اغوا کار کیپٹن رشید کو تشدد کے بعد کار سے اتارکر فرار ہو گئے۔ افطار سے کچھ دیر قبل بنوری ٹاﺅن مسجد کے قریب مسلح افراد نے محکمہ ایکسائزو ٹیکسیشن کے کانسٹیبل 40 سالہ محمد امین بلوچ کو فائرنگ کا نشانہ بنایا۔ ادھر عید گاہ کے قریب ایک نوجوان24 سالہ نور محمد ولد طیب علی کو فائرنگ کرکے ہلاک کردیا۔ رینجرز اہلکار انسپکٹر بہارعلی اور سب انسپکٹر عبداللہ انٹیلی جنس ڈیوٹی پر تھے اور منگل کی شب باچا خان چوک کے قریب ہوٹل پر بیٹھے ہوئے تھے جہاں 4مسلح افراد نے انہیں فائرنگ کا نشانہ بنایا۔ اس واقعہ کے بعد پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری نے علاقے کی ناکہ بندی کرلی اور مشکوک افراد کو حراست میں لے لیا عینی شاہدین کے مطابق چاروں حملہ آور پیدل تھے جو فائرنگ کے بعد بآسانی فرارہوگئے۔ وزیر داخلہ نے واقعہ کی رپورٹ طلب کر لی ہے۔ علاوہ ازیں ائرفورس کے لیفٹیننٹ وقاص اختر اپنے دوست کیپٹن رشید بلال کے ہمراہ کراچی سے آزاد کشمیر جا رہے تھے کہ قومی شاہراہ پر شاہ پور جہانیاں کے نزدیک اغوا کاروں نے وقاص اختر اور کیپٹن رشید بلال کو شدید زدوکوب کیا اور ان کو اغوا کرکے لے گئے۔ تھوڑی دور جاکر اغوا کاروں نے کیپٹن رشید بلال کو کار سے اتار دیا۔ پولیس نے ضلع شہید بے نظیر آباد اور نوشہرو فیروز کی ناکہ بندی کرتے ہوئے ملزمان کی تلاش شروع کر دی ہے۔