بھارت میں دوسرے روز بھی بدترین لوڈشیڈنگ‘ حکومت نے وزیر پانی و بجلی سے استعفیٰ لے لیا

بھارت میں دوسرے روز بھی بدترین لوڈشیڈنگ‘ حکومت نے وزیر پانی و بجلی سے استعفیٰ لے لیا

نئی دہلی (نوائے وقت نیوز) بھارت میں دوسرے روز بھی بدترین لوڈشیڈنگ رہی جس پر حکومت نے پانی و بجلی کے وزیر سے استعفیٰ لے لیا۔ بھارتی میڈیا کے مطابق پیر کے روز بھارت میں بجلی کا بڑا بریک ڈاﺅن آیا اور 2دن گزرنے کے باوجود وزارت پانی و بجلی اس پر قابو نہ پا سکی جس کے نتیجے میں وزیر پانی و بجلی کو وزارت سے ہاتھ دھونا پڑے۔ گذشتہ روز آدھا بھارت بجلی سے محروم ہو گیا، ٹرین سروس بھی شدید متاثر ہوئی اور لاکھوں مسافر ٹرینوں میں پھنس گئے، نئی دہلی، جے پور، مغربی بنگال، اڑیسہ سمیت 15ریاستوں میں بجلی کی فراہمی معطل رہی اور 60کروڑ افراد بجلی سے محروم ہو گئے۔ وزیراعظم آفس بھی بریک ڈاﺅن کی لپیٹ میں آ گیا۔