( علامہ اقبال کے خطبہ” مذہبی مشاہدات کی فلسفیانہ جانچ“سے اقتباس)

 فطرت کو ذات ایزدی کیساتھ وہی تعلق ہے جو کردار کو انسانی ذات کے ساتھ ہے ۔فطرت کو ایک زندہ اور ہمیشہ بڑھنے والا جسم سمجھناچاہئے جس کی ترقی اور نشوونما کی حد صرف باطنی ہے ۔
( علامہ اقبال کے خطبہ” مذہبی مشاہدات کی فلسفیانہ جانچ“سے اقتباس)