مہ و انجم کا یہ حیرت کدہ باقی نہ رہے

ایڈیٹر  |  فرمان اقبال

مہ و انجم کا یہ حیرت کدہ باقی نہ رہے 

تُو رہے اور ترا زمزمہ¿ لا موجود
جس کو مشروع سمجھتے ہیں فقیہانِ خودی
منتظر ہے کسی مُطرِب کا ابھی تک وہ سرود!
(ضربِ کلیم)