بھارتی فلموں پر پابندی زیر غور نہیں: پاکستان سنسر بورڈ

اسلام آباد (بی بی سی اردو ڈاٹ کام) پاکستانی حکام کا کہنا ہے کہ بھارت کے ساتھ ممبئی حملوں کے بعد بڑھتی کشیدگی کے پیش نظر بھارتی فلموں کی پاکستان میں ریلیز پر کوئی پابندی زیر غور نہیں ہے۔ پاکستان سنسر بورڈ کے سربراہ ملک شاہنواز نون نے بی بی سی سے بات کرتے ہوئے کسی ایسی تجویز پر غور کی اطلاعات کو غلط قرار دیا۔ ان کا کہنا تھا کہ موجودہ قانون کے تحت بھارتی سینسر بورڈ میں فلموں کی سکریننگ کا عمل جاری ہے اور جو اس عمل پر پوری اترتی ہے اسے سرٹیفکیٹ جاری کردیا جاتا ہے۔ تاہم وہ اپنے اس موقف پر قائم رہے کہ بھارتی فلموں کو پاکستان میں دکھانے سے مقامی صنعت کو شدید نقصان پہنچے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ حکومت اور لوگوں کو اپنی فلموں کے فروغ کیلئے کوششیں کرنی چاہئے۔ بھارتی اداکار عامر خان کی فلم ’’گجنی‘‘ تازہ ترین فلم ہے جو گزشتہ دنوں پاکستان کے سنیما گھروں میں بھی دکھائی جا رہی ہے۔ گزشتہ برس پاکستان میں سولہ بھارتی فلمیں ریلیز ہوئیں۔ سنیما گھر مالکان کا کہنا ہے کہ ہمسایہ ممالک کے درمیان حالیہ کشیدگی سے ان کے کاروبار پر کوئی اثر نہیں پڑا ہے۔