فلم انڈسٹری کی بحالی کیلئے 50 کروڑ امداد دی جائیں: میاں امجد فرزند

لاہور (کلچرل رپورٹر) یونائیٹڈ فلم ایسوسی ایشن کے چیئرمین میاں امجد فرزند نے کہا ہے کہ وزیراعظم یوسف رضا گیلانی کی طرف سے دی جانے والی 5 کروڑ روپے کی امداد تھوڑی ہے فلم انڈسٹری کی بحالی کیلئے 50 کروڑ روپے دیئے جائیں 5 کروڑ روپے اونٹ کے منہ میں زیرہ ہے یہ 5 کروڑ فٹ کی امداد بھی ہمارے پلیٹ فارم سے نہیں دی گئی ہمیں براہ راست امداد دی جائے ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز لاہور پریس کلب میں ایک پریس کانفرنس میں کیا اس موقع پر جمشید ظفر، سید نور، نشو، اسلم ڈار، ذوالفقار مانا، چودھری اعجاز کامران، الطاف حسین، جمشید نقوی اور الطاف قمر بھی موجود تھے میاں امجد فرزند نے مزید کہا کہ ماضی میں بھی 28 کروڑ روپے کا وعدہ کیا گیا مگر جو پورا نہیں ہوا فیڈرل بورڈ آف ریونیو سے تحفظات ہیں ایف بی آر نے 24 آئٹمز پر ڈیوٹی معاف کرنے کا وعدہ کیا تھا مگر پورا نہیں کیا۔1993ءمیں فلم انڈسٹری کو صنعت کا درجہ دے دیا گیا جس کا آج تک نوٹیفکیشن نہیں ہوا بیت المال کو فلم انڈسٹری کے غریب کارکنوں کی امداد کیلئے درخواستیں دی گئیں 6 ماہ گزرنے کے باوجود کارکنوں کو امداد نہیں ملی بھارتی فلموں کے حوالے سے واضح پالیسی کا اعلان کیا جائے سنسر بورڈ جس فلم کو چاہئے پاس کر دیتا ہے پمرا کی وجہ سے انڈسٹری کو نقصان پہنچ رہا ہے کاپی رائٹ ایکٹ کو موثر کیا جائے سینما پر 56 فیصد تفریحی ٹیکس معاف کیا جائے انہوں نے کہا کہ یونائیٹڈ فلم ایسوسی ایشن آئندہ 15 دنوں میں4 نئی فلمیں شروع کرنے کا اعلان کرے گی۔