ڈاکٹر ملیحہ لودھی کی نئی ذمہ داریاں انکی صلاحیتوں کا امتحان

ایڈیٹر  |  اداریہ
ڈاکٹر ملیحہ لودھی کی نئی ذمہ داریاں  انکی صلاحیتوں کا امتحان

ڈاکٹر ملیحہ لودھی نے اقوام متحدہ میں پاکستان کی پہلی خاتون سفیر اور مستقل مندوب کی حیثیت سے ذمہ داریاں سنبھال لی ہیں۔ ملیحہ لودھی نے اس عزم کا اظہار کیا ہے کہ وہ عالمی ادارے میں اپنے ملک کے مفادات کا بھرپور تحفظ اور دفاع کریں گی۔
ملیحہ لودھی ایک باصلاحیت اور سیاسی سوجھ بوجھ رکھنے والی خاتون ہیں۔ اپنی بہترین صلاحیتوں کی بنا پر وہ اس سے قبل امریکہ میں پاکستان کی طرف سے سفیر بھی رہی ہیں۔ اس دوران انہوں نے پاکستان کے تشخص کو بہتر انداز میں اجاگر کیا۔ انکی انہی صلاحیتوں کی بنا پر حکومت پاکستان نے انہیں اقوام متحدہ میں مستقل مندوب مقرر کیا ہے۔ یہ کوئی روایتی عہدہ نہیں۔ انکے پیشروئوں کی طرف سے اقوام متحدہ میں پاکستان کے نقطہ نظر کو اٹھایا ضرور گیا مگر جس عزم و ارادے سے اٹھایا جانا چاہئے اس کا فقدان ہی رہا ہے۔ یہی وجہ ہے مسئلہ کشمیر جہاں تھا وہیں ہے۔ پاکستان اور بھارت کے درمیان یہی واحد اور بڑا ایشو ہے جس کے باعث دونوں ممالک میں دشمنی پائی جاتی ہے اور اس تنازع پر تین جنگیں بھی ہو چکی ۔ مسئلہ کشمیر بھرپور طریقے سے اٹھانا ملیحہ لودھی کیلئے خصوصی چیلنج رہے گا۔ امید ہے کہ وہ اس سے عہدہ برا ہونے کیلئے اپنی تمام صلاحیتوں کے ساتھ ساتھ اپنا سفارتی اثر و رسوخ بھی استعمال کریں گی۔