دھاندلی کے الزام کی بجائے ضمنی الیکشن کے نتائج دیکھیں

ایڈیٹر  |  اداریہ
 دھاندلی کے الزام کی بجائے  ضمنی الیکشن کے نتائج دیکھیں

 حلقہ پی پی 136 نارووال 5 میں ہونیوالے ضمنی انتخابات میں غیر حتمی نتائج کیمطابق مسلم لیگ(ن) کے امیدوار کرنل(ر) شجاعت احمد خان کامیاب ہوگئے ۔
 تحریک انصاف نے گزشتہ روز بھی اسلام آباد میں مبینہ دھاندلی کیخلاف احتجاج کیا اور 25مئی کو فیصل آباد میں احتجاج کرنے کا اعلان کر رکھا ہے لیکن دھاندلی کا شور کرنیوالی تحریک انصاف کو ضمنی الیکشن کا رزلٹ دیکھ کر اب اس بات کا احساس ہو جاناچاہئے کہ عوام کس کے کاموں سے مطمئن ہیں ‘اگر تحریک انصاف حقیقت میں مضبوط ہوتی اور عوام کے دلوں میں اس نے جگہ بنائی ہوتی تو نارووال کے ضمنی الیکشن کا رزلٹ کچھ اور ہونا تھا لیکن مسلم لیگ(ن) کے امیدوار نے 11 ہزار کے قریب زائد ووٹ حاصل کیے ہیں۔ کیا حکمران جماعت کے امیدوار کو یہ ووٹ بھی دھاندلی سے حاصل ہوئے ہیں۔ دھاندلیوں کا واویلا کرنیوالی تحریک انصاف کے تھنک ٹینکس کو نارووال ضمنی انتخابات کا بھی اس حوالے سے ضرور جائزہ لینا چاہیے۔ خیبر پی کے کے عوام نے عمران خان اور اسکی پارٹی کے حق میں فیصلہ دیا تھا۔ عمران خان اس صوبے کو نیک نیتی سے چلاتے اور صوبے میں تبدیلی لا کر دکھاتے‘ اگر عمران خان صوبہ خیبر پی کے میں تبدیلی لا کر عوام الناس کا معیار زندگی بلند کرنے میں کامیاب ہوجاتے ہیں تو پھر دیگر صوبوں کے عوام انہیں موقع دینگے۔ صوبہ پنجاب میں پٹواری کلچر کا خاتمہ ہورہا ہے لیکن عمران خان نے پٹواری کلچر ختم کرانیکا جو دعویٰ کیا تھا وہ کے پی کے میں ابھی تک اس پر پورا نہیں اتر سکے‘ لہٰذا تحریک انصاف اپنے وعدوں کی پاسداری کرے کیونکہ وعدوں کے بارے سوال کیا جائیگا۔