متحدہ کی ایم این اے پر حملہ خادمِ پنجاب سخت ایکشن لیں

ایڈیٹر  |  اداریہ
متحدہ کی ایم این اے پر حملہ خادمِ پنجاب سخت ایکشن لیں

 اقبال ٹائون کے علاقہ میں موٹر سائیکل سوار دو نامعلوم افراد نے سرِبازار ایم کیو ایم کی ایم این اے طاہرہ آصف کو فائرنگ کرکے شدید زخمی کردیا اور فرار ہو گئے۔ شبہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ انہیں ٹارگٹ کر کے نشانہ بنانے کی کوشش کی گئی ہے جبکہ پولیس کے مطابق طاہرہ آصف کو ڈاکوئوں نے مزاحمت پر فائرنگ کر کے زخمی کیا ہے۔
متحدہ قومی موومنٹ کی ایم این اے کو ان کی پارٹی کے بقول ٹارگٹ کیا گیا یا وہ ڈکیتی میں مزاحمت پر زخمی ہوئیں ہردو صورتوں میں صرف پنجاب حکومت کی گورننس پر یہ آتا ہے جسے پولیس نے پہلے ہی منہاج القرآن اپریشن سے داغدار کردیا ہے۔جو ایک روز قبل گلو بٹ کی قیادت میں بڑی فعال نظر آئی اور دو خواتین سمیت سو کے قریب لوگوں پر سیدھی فائرنگ کرکے ان کوخون مین لت پت کردیا، ان میں سے اب تک بارہ افراد جاں بحق ہوچکے ہیں۔لاہور جیسے شہر میں کیا‘ ہر جگہ پولیس کواپنی ’’ کارکردگی‘‘ دکھانے کیلئے گلو بٹ کی قیادت کی ضرورت رہتی ہے؟پولیس کے جگہ جگہ ناکوں کا کیا فائدہ کہ اسلحہ بردار جس کو چاہیں گولیوں کا نشانہ بنا دیں۔خادم پنجاب، طاہرہ آصف پر حملے کا سخت نوٹس لیتے ہوئے متعلقہ پولیس حکام کیخلاف کارروائی اور مجرموں کی فوری گرفتاری کیلئے ہر ممکن قدم اُٹھائیں۔