جھبراں میں نوجوان کی 7 سالہ بچی سے زیادتی، ملزم گرفتار

جھبراں (نا مہ نگار) نوجوان نے گلی میں کھیلتی 7 سالہ معصوم بچی کو اٹھا کر قبرستان میں لے جا کر زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا، ایس ایچ او تھانہ بھکھی اعظم ڈھڈی نے فوری کارروائی کرتے بھاری پولیس نفری کے ہمراہ ریڈ کر کے ملزم کو گرفتار کر کے تھانہ کی حوالات میں بند کر دیا ہے اور بچی کے ڈاکٹری ملاحظہ کے لئے اسے اپنی نگرانی میں ہسپتال بھیج دیا جہاں پر لیڈی ڈاکٹر نے زیادتی کی تصدیق کر دی ہے۔ کھاریانوالہ کے عباس علی ولد عبدالغنی کمبوہ کی بچی مسکان جس کی عمر 7/8 بیان کی گئی ہے، محلہ کی دکان سے کھانے کےلئے ٹافیاں لینے جا رہی تھی محلے دار راشد علی نے دبوچ لیا اورکھاریانوالہ کے مقامی قبرستان میں لے گیا جہاں پر بچی سے زیادتی کرتا رہا اور حالت غیر ہونے پر اے چھوڑ کر فرار ہوگیا تاہم یہ بات بھی گردش کر رہی ہے بچی کے سات ریپ نہیں ہوا صرف کوشش کی گئی ہے۔ علاوہ ازیں نمائندہ خصوصی+ نامہ نگاران کے مطابق فیصل آباد، عارف والا، ڈسکہ میں 9 سالہ بچے اور 2 خواتین سے زیادتی کی گئی۔ ریلوے کالونی کے ٹیپو سلطان کے 9 سالہ بھانجے کو نامعلوم شخص زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد فرار ہو گیا، ڈگلس پورہ کی شکیلہ سے تین نامعلوم افراد نے نشہ آور چیز کھلا کر زیادتی کی۔ عارف والا میں طلاق ےافتہ نصےراں مال منڈی مےں گوبر اٹھانے کےلئے گئی وہاں پر موجود چار افراد عثمان، رمضان، علی رضا، ذوالفقارنے خاتون کو قابو کر کے اسلحہ کے زور پر زےادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔
زیادتی