شیشہ کیفیز کے خلاف آپریشن رکوانے کیلئے درخواست کی سماعت ملتوی

لاہور (وقائع نگار خصوصی) چیف جسٹس ہائی کورٹ عمر عطا بندیال نے ضلعی حکومت کی جانب سے شیشہ کیفیز کے خلاف آپریشن کو چیلنج کرنے کی درخواستوں کی سماعت 10دسمبر تک ملتوی کر دی۔ شیشہ کیفوں کی جانب سے عدالت کو بتایا گیا کہ ضلعی حکومت منشیات اور غیر قانونی نشہ آور اشیاءکے استعمال کرنے کے بہانے شیشہ کیفوں کے خلاف کارروائی کر رہی ہے حالانکہ درخواست گزاروں کے ریسٹورنٹس میں ایسا کوئی اقدام نہیں کیا جاتا۔ ضلعی حکومت اور منشیات کے خلاف مہم چلانے والی ایک این جی او کی جانب سے عدالت کو بتایا گیا کہ ان ریسٹورینٹ پر نوجوان نسل شیشہ کے استعمال کے بہانے غیر قانونی اشیاءاستعما ل کر رہے ہیں شیشہ کیفے منشیات کی محفوظ پناہ گاہ ہیں اور شیشہ کی آڑ میں نشہ کرتے ہیں لہٰذا عدالت سے استدعا ہے کہ ان پر پابند ی عائد کی جائے اور ان ریسٹورنٹ کے خلاف کارروائی کرنے کے احکامات جاری کرے۔ فاضل عدالت نے فریقین کے وکلاءکو ہدایت کو مزید دلائل دینے کی ہدایت کرتے ہوئے سماعت اگلی تاریخ تک ملتوی کر دی۔