ریٹائر ملازمین کی کٹوتی شدہ گروپ انشورنس کا معاملہ، فریقین کے وکلا حتمی بحث کیلئے طلب

ریٹائر ملازمین کی کٹوتی شدہ گروپ انشورنس کا معاملہ، فریقین کے وکلا حتمی بحث کیلئے طلب

لاہور(وقائع نگار خصوصی) لاہور ہائیکورٹ نے ریٹائرڈ ملازمین کو کٹوتی شدہ گروپ انشورنس کی رقم نہ دینے کیخلاف دائر درخواست پر پنجاب حکومت، نیشنل انشورنس کارپوریشن اور ملازمین کے وکلاء کو بائیس مارچ کو حتمی بحث کیلئے طلب کر لیا۔چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ مسٹر جسٹس سید منصور علی شاہ نے ریٹائرڈ سرکاری ملازمین کی درخواستوں پر سماعت کی، درخواستگزاروں کی طرف سے ثمرہ ملک اور چودھری نصیر نے موقف اختیار کیا کہ پنجاب حکومت سرکاری ملازمین کی تنخواہوں سے ماہانہ گروپ انشورنس کی رقم کاٹتی ہے لیکن یہ رقم ریٹائرڈ سرکاری ملازم کو ادا نہیں کی جاتی ہے،انہوں نے بلوچستان ہائیکورٹ کا حوالے دیتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ بلوچستان ہائیکورٹ نے اس اقدام کو غیرقانونی قرار دیا ہے جس کے بعد اب ریٹائرمنٹ پر ہی ملازم کو گروپ انشورنس کی رقم ملتی ہے۔