لاہور ہائیکورٹ نے سکولوں کی سکیورٹی سے متعلق حکومت سے تحریری رپورٹ طلب کر لی

لاہور ہائیکورٹ نے سکولوں کی سکیورٹی سے متعلق حکومت سے تحریری رپورٹ طلب کر لی

لاہور (وقائع نگار خصوصی) لاہور ہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس سید منصور علی شاہ نے سیکرٹری داخلہ اور سیکرٹری سکولز کو تعلیمی اداروں میں کئے گئے سکیورٹی انتظامات کا از سر نو جائزہ لیکر ایک چارج رپورٹ داخل کرنے کا حکم دے دیا فاضل عدالت نے قرار دیا کہ دھمکیوں کے باوجود طلباء کا تعلیمی اداروں میں جانا اچھی بات ہے۔ حکومت تعلیمی اداروں میں سکیورٹی کے اقدامات کو یقینی بنائے سپیشل سیکرٹری داخلہ نے بتایا کہ حکومت نے سکیورٹی آلات کیلئے 2 ارب روپے کی رقم جاری کی ہے جبکہ تمام اضلاع کے ڈی سی اوز کی نگرانی میں معائنہ کمیٹیاں بھی تشکیل دے دی گئی ہیں تمام تعلیمی اداروں کی بیرونی دیواریں اونچی کروائی گئی ہیں۔  سی سی پی او لاہور نے فاضل عدالت کو بتایا کہ سکیورٹی کے ایشو پر اؤلین ترجیح دی جا رہی ہے درخواست گزار نے مؤقف اختیار کیا حکومت نے سکیورٹی کے مکمل انتظامات  نہیں کئے مزید سماعت 19 جنوری تک ملتوی کر دی گئی۔