جج اللہ کی عدالت میں جوابدہ ہیں، معاشرے کیلئے نمونہ بنیں: جسٹس نجم الحسن

لاہور(وقائع نگار خصوصی)ہائی کورٹ جسٹس شیخ نجم الحسن نے کہا کہ ایک جج پورے معاشرے کیلئے رول ماڈل ہونا چاہیے ۔ اگر جج کسی معاملے کو بہتر انداز میں مختصر کرتے ہوئے بہترین انصاف فراہم کریں گے تو سائلین کو فائدہ ہوگا۔ہم ہر مقدمہ کیلئے سب سے بڑی اللہ تعالیٰ کی عدالت میں جوابدہ ہیں،ان خیالات کا اظہار انہوں نے پنجاب جوڈیشل اکیڈمی میں ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن ججز کے دو ہفتوں پر مشتمل پری ٹریننگ کورس کی اختتامی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر ڈسٹرکٹ ینڈ سیشن جج لاہور سید حامد حسین شاہ اورڈائریکٹر ایڈمن ناصر حسین شاہ بھی موجود تھے۔ جسٹس شیخ نجم الحسن نے کہا کہ سیشن ججز کو مناسب ٹریننگ کی عدم فراہمی سے کچھ مسائل بھی ہیں جن کے حل کیلئے انہیں اکیڈمی میں بہترین تربیت دی جائے گی۔انہوںنے کہا کہ ضلعی عدلیہ کے ججوں کو لیپ ٹاپ اور انٹرنیٹ سمیت دیگر ماڈرن ٹیکنالوجی کی سہولیات فراہم کی جا ئیں گی ۔تقریب سے ٹریننگ  کے شرکاء کے نمائندے ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج اعجاز احمد نے بھی اپنے خیالات کا اظہار کیا۔ تربیتی کورس میں 34 ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن ججوں نے شرکت کی۔