گھوٹکی میں پنچائیت کی جانب سے جرمانہ ادا نہ کرنے اور ونی کیخلاف آواز اٹھانے پر جرگے نے محنت کش پر کتے چھوڑ دئیے،ہسپتال لے جانے والے پر بھی جرمانہ عائد کر دیا گیا

گھوٹکی میں پنچائیت کی جانب سے جرمانہ ادا نہ کرنے اور ونی کیخلاف آواز اٹھانے پر جرگے نے محنت کش پر کتے چھوڑ دئیے،ہسپتال لے جانے والے پر بھی جرمانہ عائد کر دیا گیا

گھوٹکی کے نواحی گاؤں میں کاروکاری کے الزام میں جرگے نے محنت کش پر چار لاکھ روپے جرمانہ اور دوکمسن بچیاں ونی کرنے کا حکم دیا تھا، پنچائیت کے حکم پر تمام جمع پونجی فروخت کرکہ محنت کش وزیر نے دو لاکھ روپے جرمانہ تو ادا کر دیا لیکن بچیاں ونی کرنے سے انکار کر دیا، جس پر جرگے نے اس وزیر پر کتے چھوڑ دئیے جو اسے بھنھوڑتے رہے اور اسے شدید زخمی کر ڈالا، ستم ظریفی تو یہ ہے کہ جرگے نے اعلان کیا کہ جو اسے ہسپتال لے جائے گا اسے بھی جرمانہ ادا کرنا پڑے گا، محنت کش وزیر اپنے بوڑھی ماں کے ساتھ گھر میں مقید ہے، لیکن پولیس علاقے کے عوام سب کچھ جانتے ہوئے بھی کچھ نہیں کر پا رہے،
.