چنیوٹ: سابق منگیتر کا شادی والے گھر دھاوا، دلہن اغواء کرلی، پنڈی بھٹیاںسے بازیاب

چنیوٹ (نامہ نگار) سابق منگیتر نے شادی والے گھر پر دھاوا بول دیا دلہن کو اغوا کرلیا، گھر والوں کو بھی تشدد کا نشانہ بنایا۔ خواتین، بچوں سمیت متعددافراد زخمی ہو گئے۔ چنیوٹ کے نواحی علاقہ موضع چکبندی کے رہائشی اللہ یار کی 20 سالہ بیٹی اظہرہ بی بی کی قمر عباس کے ساتھ اگلے روز شادی طے تھی اور اس سلسلہ میں تمام انتظامات بھی مکمل کر لئے گئے تھے مگر ایک سال قبل پنڈی بھٹیاں کے ماموں زاد کزن عمران سے منگنی ہوئی تھی جو بعد میں کسی وجہ کے باعث توڑ دی گئی جس کا محمد عمران کو رنج تھا  ملزم عمران نے گزشتہ رات اپنے بھائیوںکے ہمراہ شادی کی تقریب کو میدان جنگ میں بدل دیا ۔ شادی والے گھر میں موجود خواتین، بچوں اور بوڑھوں پر تشدد کرتے رہے مزاحمت کرنے پر دس سالہ فضل عباس اور اللہ یار کے سرپر بندوقوں کی بٹ مارے جبکہ کنیز بی بی اور دیگر کئی خواتین کے کانوں میں موجود سونے کی بالیاں نوچ لی گئیں جس سے ان کے کان پھٹ گئے اور دلہن اظہرہ بی بی کو اغوا کرکے لے گئے۔ زخمیوں کو ڈسٹرکٹ ہیڈکواٹر ہسپتال پہنچا دیا گیا ہے۔ نوائے وقت رپورٹ کے مطابق چنیوٹ میں شادی کی تقریب کے دوران اغواء کی دلہن پنڈی بھٹیاں سے بازیاب ہوگئی۔