پنجاب پولیس کی تاریخ میں پہلی بار یکساں ’’ بیٹ بکس ‘‘ تیار

لاہور(نامہ نگار) جرائم کو کنٹرول کرنے، تھانہ کلچر کو تبدیل کرنے، حساس معلومات کو یکجاء کرنے اور انصاف کے حصول میں رشوت کے خاتمے کے لئے پنجاب پولیس کی تاریخ میں پہلی مرتبہ یکساں بیٹ بکس تیارکر لی گئیں اور ان بیٹ بکس میں درج ہونے والی تمام انفارمیشن کوایک سنٹرلائزڈ کمپیوٹر سسٹم (CCS)میں بھی شامل کر دیا گیا اور متعلقہ بیٹ افسروں نے ڈیٹا اینٹری کا کام شروع کر دیا۔اس سلسلے میں پہلی دفعہ 150صفحات پر مشتمل 3600بیٹ بکس تیار کر کے اضلاع کو فراہم کر دی گئیں۔ان بیٹ بُکس میں 7مختلف قسم کی کیٹگریز رکھی گئی ہیں۔جن میں آئی جی پنجاب کی طرف سے بیٹ بکس میں انٹری کرنے والوں اور افسروں کے لئے ایس او پیز جبکہ دوسری کیٹگری میں بیٹ میں گشت، علاقائی جرائم کے حوالے سے اہم عمارات کی فہرست، پولیس کی ڈیوٹی اور اہم مراکزکی فہرستیںاور ان کی سیکیورٹی اور دہشت گردی کی روک تھام کے حوالے سے مساجد، مدارس، گرجا گھروں ، قادیانیوں کی عبادت گاہوں اور اہم مذہبی شخصیات کی نگرانی، خطرناک مجرموں اور اشتہاریوں کی گرفتاری کے حوالے سے فلیشنگ پوائنٹس اور مشکوک افراد اور دیگر تنظیموں کی مانیٹرنگ کے حوالے سے تفصیلی گوشوارے بنائے گئے ۔