اپلائیڈ فار اور غیر نمونہ نمبر پلیٹس والی موٹرسائیکلیں کاہنہ پولیس کیلئے آمدن کا ذریعہ

کاہنہ (نامہ نگار) سی سی پی او لاہور کے اپلائیڈ فار اور غیر نمونہ نمبر پلیٹ والی موٹر سائیکلوں پکڑنے کے احکامات کاہنہ سرکل پولیس نے ”کمائی“ کا ذریعہ بنا لیا۔ تفصیلات کے مطابق ساری پولیس اپلائیڈ فار اور غیر نمونہ نمبر پلیٹ والی موٹر سائیکلیں پکڑنے میں مصروف ہے۔ 500 سے 1000 روپے تک موٹر سائیکل چھوڑنے کی رشوت وصول کی جاتی ہے، جرمانے کا طویل طریقہ کار ہونے کی وجہ سے شہری پولیس کے ساتھ موقع پر ہی موٹر سائیکل چھڑوانے کے لئے رشوت دینے پر مجبور ہیں۔ رشوت نہ ملنے اور جرمانہ بھرنے کے باوجود موٹر سائیکل نہیں چھوڑی جاتی۔ اہلکار تھانوں سے باہر بھی روزانہ ہزاروں روپے کی دیہاڑیاں لگاتے ہیں اور تھانوں کے منشیوں سمیت تمام پولیس اہلکار آپس میں مل بانٹ کر کھاتے ہیں، گشت کرنے کے لئے تھانوں میں بند موٹر سائیکلوں کی ٹینکیوں سے تیل چوری کر لیا جاتا ہے، لاتعداد موٹر سائیکلیں پکڑنے کے باوجود جرائم کی روک تھام میں کمی نہیں آ سکی۔ عوام نے وزیراعلیٰ اور آئی جی سے مطالبہ کیا کے بلاوجہ شہریوں کو تنگ کرنے کا سلسلہ فوری بند کیا جائے۔