بلند ترین سطح‘ رواں مالی سال بجٹ خسارہ 8 فیصد سے تجاوز کر جائیگا

بلند ترین سطح‘ رواں مالی سال بجٹ خسارہ 8 فیصد سے تجاوز کر جائیگا

اسلام آباد (این این آئی) رواں مالی سال کے دوران بجٹ خسارہ ملکی تاریخ کی بلند ترین سطح ساڑھے 8 فیصد سے تجاوز کرجائے گا جبکہ ملکی معیشت کی ترقی ساڑھے 4 فیصد بجٹ ہدف کے بجائے بمشکل 3.2 فیصد کے لگ بھگ ہو گی۔ ذرائع وزارت خزانہ کے مطابق رواں مالی سال ملکی تاریخ کا مشکل ترین سال ہو گا جس میں فیڈرل بورڈ آف ریونیو کا اپنے ٹیکسوں کے ہدف میں 2 سو ارب روپے سے زیادہ کے خسارے کا سامنا ہے۔ جبکہ توانائی کے شعبہ میں دی جانے والی سبسڈی بھی بجٹ کے 180 ارب روپے کی نسبت 311 ارب روپے سے تجاوز کر گئی ہے۔ حکومت کو اتصلات سے 80 کروڑ ڈالرز اور تھری جی لائسنس کی نیلامی سے ایک ارب ڈالر حاصل ہونے کی توقع بھی پوری نہیں ہوئی جس سے نہ صرف معیشت کی شرح نمو کا ہدف ناقابل حصول ہوگیا ہے بلکہ بجٹ خسارہ بھی ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ ساڑھے 8 فیصد سے تجاوز کر جائے گا۔
خسارہ