آل پاکستان انجمن تاجران کا دکانیں 9 بجے تک کھولنے کی اجازت دینے کیلئے 31 مئی کا الٹی میٹم

لاہور(نیوز رپورٹر) آل پاکستان انجمن تاجران کے صدر حاجی مقصود احمد بٹ نے اعلان کیا ہے کہ اگرحکومت نے 31مئی تک 9بجے رات دکانیں کھولنے کی اجازت نہ دی تو تاجر 8بجے دکانیں بند کرنے کی بجائے پہلے کی طرح اپنے کاروبار جاری رکھیں گے ۔یہ اعلان انہوں نے گزشتہ روز لاہو ر پریس کلب میں آل پاکستان انجمن تاجران کے جنرل سیکرٹری عبد الرزاق ببرسمیت دیگر عہدیداروں کے ہمراہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے کہاکہ توانائی بحران پر قابو پانے کیلئے وزیراعلیٰ پنجاب میاں شہبازشریف کے کہنے پر تاجروں نے رات 8بجے مارکیٹیں بند کرنے کے فیصلے کو تسلیم کیا مگر بعد میں تاجروں کو احساس ہوا کہ 8بجے رات مارکیٹیں بند کرنے سے کاروبار ختم ہوگئے ہیں اس حوالے سے انجمن تاجران لاہور کے زیراہتمام 11مئی کو تاجر کنونشن بلوایا گیا جس میں مارکیٹیں رات 9بجے تک کھلی رکھنے کا فیصلہ کر کے حکومت کو 25مئی کی ڈیڈ لائن دی گئی اب ہم نے حکومت کو ٹائم دینے کیلئے ڈیڈلائن 31مئی تک کردی ہے تاکہ ملک کے چاروں وزرائے اعلی ،وزیراعظم تاجروں کے مسئلے کا حل نکال سکیں۔ حکومت کو 31مئی کے بعد کوئی نئی ڈیڈ لائن نہیں دی جائے گی۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ حکومت تاجروں کو بجلی فراہم نہ کرے مگر انہیں یو پی ایس اور جنریٹر پر کاروبار جاری رکھنے کی اجازت دے۔ انہوں نے کہاکہ سندھ میں شادی ہال ساڑھے 12بجے کھلے رہتے ہیں پنجاب میں بھی شادی ہالوں کو 12بجے تک کھولنے کی اجازت دی جائے ۔انہوں نے کہاکہ حکومت نے ویلیو ایڈڈٹیکس ،پراپرٹی ٹیکس میں 100فیصد اضافے کو تاجر مسترد کرتے ہیں اوراگر انہیں زبردستی ٹھونسا گیا تو اس کیخلاف شٹر ڈاﺅن کر کے تحریک چلائینگے۔