مصر پاکستان اور چین کے بجائے فرانس سے لڑاکا طیارے خریدے گا

مصر پاکستان اور چین کے بجائے فرانس سے لڑاکا طیارے خریدے گا

کراچی (سٹاف رپورٹر) مصر نے پاکستان اور چین سے جے ایف 17 تھنڈر کے بجائے فرانس سے چوبیس رافیل لڑاکا طیارے لینے کا اعلان کردیا۔ مصر 2010 سے پاکستان سے جے ایف 17تھنڈر خریدنے میں دلچسپی ظاہر کر رہا تھا۔ چینی اخبار چائنہ ٹائمز اور واشنگٹن کی ڈیفنس نیوز کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ مصر نے داعش کے خطرے اور مغربی ممالک سے بہتر تعلقات کی خاطر پاکستان سے تھنڈر طیاروں کی بجائے فرانس سے معاہدہ کرنے کو ترجیح دی ہے۔ فرانس بھارت اور قطر کو رافیل طیارے فروخت کرنے کی کوشش میں ہے جب کہ چین اور پاکستان اپنے طیاروں کے ممکنہ خریدار دیکھ رہے ہیں۔ ارجنٹینا، نائیجیریا اور میانمار وہ ممالک ہیں جو جے ایف تھنڈر کے حصول کے لئے چین اور پاکستان کے ساتھ مذاکرات کر رہے ہیں۔ شنگھائی کی ایک نیوز سائیٹ کے حوالے سے کہا گیا ہے کہ مصر نے پاکستان اور چین سے جے ایف17 تھنڈر کے بجائے فرانس سے5 اعشاریہ 9ارب ڈالر کے 24رافیل طیارے خریدنے کا معاہدہ کرلیا ہے۔ بارہ فروری کو فرانسیسی صدر فرینکوئس ہالینڈ اور مصری صدر عبدالفتاح السیسی کے درمیان پانچ ارب نوے کروڑ ڈالر مالیت کے ایک دفاعی پیکیج پر اتفاق ہوا ہے، جس میں رافیل لڑاکا طیارے اور کثیر الجہتی مشن کی ایک فریگیٹ شامل ہے۔
 رافیل طیارے