کمرشل قونصلروں کو برآمدات بڑھانے کا ہدف دینا خوش آئند ہے: پیاف

کمرشل قونصلروں کو برآمدات بڑھانے کا ہدف دینا خوش آئند ہے: پیاف

لاہور  (کامرس رپورٹر)ٹریڈ  ڈو یلپمنٹ  اتھارٹی آف پاکستان کی طرف سے  بیرون ملک  سفارت  خانوں میں تعینات  کمرشل  قونصلروں کو برآمدات  بڑھانے کے اہداف  دینا نہایت خوش آئیند   اور  برآمدات دوست اقدام  ہے  ۔ پیاف کے دیرینہ  مطالبہ پر عمل ہوا ہے  ۔ بہتر نتائج  کی توقع ہے  ۔  پیاف کے چیئرمین  ملک طاہر جاوید  نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ  برآمدات میں  اضافہ کے لیے  بیرون ملک  سفارت خانوں میں تعینات کمرشل قونصلروں  کو متحرک  کرنا اور   جواب  دہی کا احساس  پیدا کرنا  بے حد ضروری ہے  ۔پیاف کے چیئرمین نے کہا ہے کہ  کمرشل قو  نصلروں  کا اصل  فریضہ  یہی ہے کہ  متعلقہ ملک   کی  تجارتی ضروریات   سے ملکی تاجروں اور برآمد کنندگان کو آگاہ کریں  ۔میلوں اور نمائشوں میں  شرکت کے خوائش مند  برآمد کنندگان کو  سہولتیں  دیں  ۔  وزٹ کرنے والے  ملکی تاجروں  کے لیے ملاقاتوں کا اہتمام کریں  ۔ انہوں نے کہا ہے کہ اگر  کوئی کمرشل قونصلر  مشنری سپرٹ کے ساتھ   خارجہ تجارت بڑھانے  میں اپنا شاندار  اور متاثر کن  کردار  ادا نہیں کرتا  تو اس کا ہونا یا نہ ہونا ایک برابر ہے  ۔ ملک طاہر جاوید نے   ٹی   ڈیپ کے  سربراہ  پر زور دیا ہے کہ  وہ  اندرون ملک تاجروں  سے ملاقاتوں کا سلسلہ تیز تر کرکے  تجاویز  حاصل کریں  ۔