سٹاک مارکیٹ پر چھائے مندے کے بادل مزید گہرے سرمایہ کاروں کے 42 ارب روپے سے زائد ڈوب گئے

سٹاک مارکیٹ پر چھائے مندے کے بادل مزید گہرے سرمایہ کاروں کے 42 ارب روپے سے زائد ڈوب گئے

کراچی(کامرس رپورٹر) پاکستان اسٹاک ایکسچینج (پی ایس ایکس) میں مندی کا رجحان برقرار رہا، کے ایس ای 100 انڈیکس 266.15 پوائنٹس کی کمی سے 40237.53پوائنٹس پر بند ہوا، مارکیٹ سرمایہ میں42 ارب42کروڑ78 لاکھ29 ہزار 613 روپے کی کمی رونماء ہوئی تاہم تجارتی حجم میں73 کروڑ58 لاکھ 28 ہزار740 روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔ اسی طرح خرید و فروخت میں بھی84 لاکھ 28 ہزار 240 حصص کی تیزی رہی۔ تفصیلات کے مطابق کاروباری ہفتے کے چوتھے روز جمعرات کو بھی پی ایس ایکس میں حصص کی فروخت کے دبائو اور مارکیٹ کریکشن کے باعث مندی کا رجحان برقرار رہا اورکے ایس ای 100 انڈیکس 266.15 پوائنٹس کی کمی سے 40237.53 پوائنٹس پر بند ہوا جبکہ کے ایس ای 30 انڈیکس بھی 154.62 پوائنٹس کی مندی سے 20326 پوائنٹس پر بند ہوا۔ اسی طرح کے ایس سی آل شیئر انڈیکس میں 110.72 پوائنٹس کی کمی رونماء ہوئی جبکہ کے ایم آئی 30 انڈیکس میں359.61 پوائنٹس کی مندی ریکارڈ کی گئی۔ حصص کی خرید و فرخت میں اتار چرھائو کے باعث بینکس ٹریڈ ایبل (بی اے ٹی آئی) انڈیکس 94.52 پوائنٹس کی کمی سے 15211.38 پوائنٹس پر بند ہوا جبکہ آئل اینڈ گیس ٹریڈ ایبل (او جی ٹی آئی) انڈیکس 89.50 پوائنٹس کی تیزی سے 17333.42 پوائنٹس پر بند ہوا۔ پی ایس ایکس - کے ایم آئی انڈیکس 92.80 پوائنٹس کی کمی سے 20082.49 پوائنٹس پر بند ہوا۔ مارکیٹ میں مجموعی طور پر 395 کمپنیوں کے حصص کا لین دین ہوا جن میں سے73 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں تیزی،306 کمپنیوں کے حصص کے بھائو میں مندی،16 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔ مجموعی طور پر13 کروڑ79 لاکھ 91 ہزار 430 حصص کا کاروبار ہوا جس کا تجارتی حجم6 ارب 12 کروڑ75 لاکھ 11 ہزار 337 روپے رہا۔ مارکیٹ کیپیٹل 84کھرب 54 ارب 34کروڑ 12 لاکھ 55 ہزار 645 روپے سے کم ہوکر 84 کھرب 11ارب91 کروڑ34 لاکھ 26ہزار32 روپے رہ گیا۔