ٹیکنیکل سٹاف کی عدم دستیابی: 96 ریلوے انجنوں کی بحالی کیلئے وزارت خزانہ سے ملنے والے 6 ارب روپے واپس

ٹیکنیکل سٹاف کی عدم دستیابی: 96 ریلوے انجنوں کی بحالی کیلئے وزارت خزانہ سے ملنے والے 6 ارب روپے واپس

لاہور (خصوصی نامہ نگار) وزارت خزانہ نے 96 لوکوموٹیو انجنوں کی ری ہیبلیٹیشن کےلئے وزارت ریلوے کو6 ارب 10لاکھ روپے قرضہ دینے کا فیصلہ کیا لیکن مینجنگ ڈائریکٹر پراکس ریلوے آفتاب میمن نے ٹیکینکل سٹاف نہ ہونے کی وجہ سے رقم لینے سے انکار کرتے ہوئے چیر¿مین ریلوے عارف عظیم کوخط لکھا ہے کہ وہ یہ رقم ریلوے کے آپریشن ڈیپارٹمنٹ کو دیکر ان سے کام کروا لیں جبکہ گزشتہ ماہ کنٹریکٹ پر بھاری تنخواہ پر رکھے گے سابق جنرل مینجرریلوے فاروق عزیز بھی ذیلی ادارے پراکس کوٹیکینکل سٹاف کی کمی کی وجہ سے چھوڑ کر چلے گئے لیکن ریلوے حکام نے96 لوکوموٹیو انجنوں کی مرمت کی بجائے اس رقم سے65 لوکوموٹیو انجنوں کی ری ہیبلیٹیشن کرنے کا فیصلہ کیا اور اس کے کچھ دنوں کے بعد ہی ریلوے حکام نے اسی رقم سے36 لوکوموٹیو انجنوں کو ری ہیبلیٹیشن کرنے کا فیصلہ کیا تاہم ایم ڈی پراکس نے اس رقم کو لینے سے انکار کر دیا کہ اس کام میں کوئی حقیقت نظر نہیں آتی۔