”وفاقی حکومت ”پنجاب حکومت بدنام کرو اور پیسہ بناﺅ“ پلان پر عمل پیرا ہے“

لاہور(نیوزرپورٹر) صو بائی وزیر زراعت احمد علی اولکھ نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت کو 12لاکھ ٹن کھاد درآمد کر نے کے لئے تحریری طور پر چٹھی ارسال کی گئی صرف 2لاکھ 60ہزار ٹن کھاد درآمد کر نے کے ٹینڈر جاری کئے گئے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ درآمد کی جا نے والی کھاد کی شپ منٹ کا ابھی تک شیڈول جاری نہیں کیا گیا جس کی وجہ سے صو بہ میں کھاد کا شدید بحران پیدا ہو گیا ہے صو بائی وزیر نے کہا کہ وفاقی حکومت\\\" پنجاب حکومت بد نام کرو اور پیسہ بناﺅ\\\" پلان پر عمل کر رہی ہے ۔وہ سرکٹ ہاﺅس ملتان میں میڈیا کے نمائندوں گفتگو کر رہے تھے ۔ صو بائی وزیر نے کہا کہ ملک میں گیس کی قلت ہے لیکن اس کے باوجود اسے بجلی پیدا کر نے کے لئے پاور سٹیشن میں استعمال کیا جارہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ فرٹیلائزر کمپنیوں کو گیس کی 20 فیصد قلت کا سامنا ہے جس کےلئے ضروری ہے کہ 12لاکھ ٹن کھاد درآمد کی جائے جبکہ وفاقی حکومت نے صرف 7لاکھ ٹن کھاد درآمد کر نے کی منظوری دی ہے جس سے صرف 2لاکھ 60 ہزار ٹن کھاد درآمد کر نے کے ٹینڈر جاری کئے گئے ہیں ۔