عالمی بینک کا اعتراض مسترد‘ ٹیکسوں میں ہم آہنگی پیدا کرنے کیلئے ترمیمی آرڈیننس جاری کر رہے ہیں : پاکستان

اسلام آباد (نمائندہ خصوصی) پاکستان نے ٹیکس اصلاحات کی قانون سازی کے متعلق عالمی بنک کا اعتراض مسترد کر دیا ہے اور کہا ہے کہ پارلیمنٹ حکومت یا نجی بل کی حیثیت سے متعارف کرائی جانے والی قانون سازی کو منظور یا نامنظور کرنے کا مکمل اختیار رکھتی ہے۔ وزارت خزانہ نے عالمی بنک کی طرف سے ٹیکس اصلاحات کےلئے حالیہ قانون سازی کے متعلق اعتراض کو مسترد کر دیا اور جوابی خط میں لکھا ہے کہ پاکستان ٹیکس اصلاحات کےلئے باعزم ہے۔ حکومت نے ٹیکسوں میں ہم آہنگی پیدا کرنے کے لئے ترمیمی آرڈیننس پہلے ہی جاری کر رہا ہے۔ عالمی بنک نے اپنے خط میں حکومت کے قانون سازی کرنے کے طریقہ کار اور قانون میں تبدیلی کے پارلیمنٹ کے حق کے متعلق جن شکایت کو اٹھایا ہے وہ عالمی بنک کے ایشوز نہیں ہیں جن پر تشویش ظاہر کی جائے۔ نئے پیشہ وارانہ گروپ کے قیام کےلئے ایک حکم جاری کیاگیا تاہم اس کو عدالت میں چیلنج کیا گیا ہے۔ حکومت نے جو اس معاملہ میں فریق ہے اپنے موقف کا دفاع کیا ہے۔