پاکستانی تاجر کینیڈین سے ملکر منصوبہ بندی کریں: براڈہٹ

 لاہور (نیوز رپورٹر)کینیڈین پارلیمنٹ کے رُکن براڈ بٹ (Brad Butt)نے پاکستانی تاجروں پر زور دیا ہے کہ وہ مختلف شعبوں میں کینڈا کی مہارت سے بھرپور فائدہ اٹھائیں اور کینیڈین تاجروں کے ساتھ مل کر مشترکہ منصوبہ سازی کا آغاز کریں۔  ان خیالات کا اظہار انہوں نے  لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری میں  اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔  لاہور چیمبر کے سابق نائب صدر سعیدہ نذر، ایگزیکٹو کمیٹی رکن میاں زاہد جاوید احمد ،بابر محمود چودھری اور رحمت اللہ جاوید نے بھی اس موقع پر خطاب کیا۔ براڈ بٹ نے کہا کہ کینڈا پاکستان کے ساتھ تجارت و سرمایہ کاری کے فروغ میں گہری دلچسپی رکھتا ہے۔   کینڈا میں رہنے والے پاکستانی تاجر کینڈین معیشت کے استحکام میں بہت اہم کردار ادا کررہے ہیں۔  لاہور چیمبر  کے صدر انجینئر سہیل لاشاری نے کہا کہ کینڈا نے ہمیشہ بہت سے معاملات پر پاکستان کی حمایت اور معاشی تعاون کیا ۔ تھوڑی سی کوشش کرکے آئندہ کچھ سالوں میں دوطرفہ تجارت کا حجم دو ارب ڈالر تک بڑھایا جاسکتا ہے۔  دونوں ملکوں کے تاجروں کو توانائی، فوڈ پراسیسنگ، ٹیلی کمیونیکیشن اور انفارمیشن ٹیکنالوجی سمیت دیگر شعبوں میں مشترکہ منصوبہ سازی کرنی چاہیے۔  پاکستان کی کینڈا کو نمایاں برآمدات میں ٹیکسٹائل مصنوعات، کپاس، بیڈ لینن اور ریڈی میڈ گارمنٹس جبکہ درآمدات میں آئل سیڈ، گرین سیڈ، پھل ، سبزیاں، آئل اور مشینری وغیرہ شامل ہیں۔