ملک اندھیروں میں ڈوب رہا ہے‘ کالا باغ ڈیم فوری تعمیر کیا جائے : چیئرمین پیاف

ملک اندھیروں میں ڈوب رہا ہے‘ کالا باغ ڈیم فوری تعمیر کیا جائے : چیئرمین پیاف

لاہور (کامرس رپورٹر) پیاف نے کا لا باغ ڈیم کی تعمیر کے بارے میں عدلیہ کے ریمارکس کو امید کی کرن قرار دیا ہے۔ پیاف کے چیئرمین انجینئر سہیل لاشاری نے کہا کہ کالا باغ ڈیم سستی بجلی بنانے کا سودمند ترین ذریعہ ہے جس پر کثیر سرمایہ خرچ اور ابتدائی کام مکمل ہوچکا ہے لیکن حکومتوں نے ڈیم کی تعمیر میں سیاسی مصلحتوں کو قومی و ملکی ضرورتوں پر ترجیح دی۔ انہوں نے کہا کہ ارباب اقتدار کے سستی بجلی بنانے کے سلسلے میں غیرسنجیدہ رویوں کی وجہ سے ملک تیزی سے اندھیروں اور ملکی صنعت بندش کی طرف بڑھ رہی ہے۔ معیشت زبوں حالی کا شکار اور بےروزگاری اور افراط زر میں اضافہ ہو رہا ہے۔ کالا باغ ڈیم کی تعمیر فوری شروع کی جائے۔ کالا باغ ڈیم کی تعمیر شروع کرانے کیلئے پیاف کی کوششوں کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ واپڈا کے سابق چیئرمینوں، آبی ماہرین، ایوان ہائے صنعت و تجارت کے نمائندوں کا متفقہ موقف سامنے آچکا ہے کہ کالا باغ ڈیم ملک و قوم کا قیمتی اثاثہ ہے۔ اسکا محل وقوع بالکل درست ہے۔ اس کی تعمیر سے ملک کے کسی حصہ یا صوبہ کی زمینوں یا آبادیوں کو نقصان کا کوئی اندیشہ نہیں۔ انہوں نے بتایا کہ کالا باغ ڈیم صرف پنجاب کیلئے فائدہ مند نہیں بلکہ خیبر پی کے سے غربت ختم کرنے میں مددگار ثابت ہوگا۔ انہوں نے بتایا کہ ڈیم سے صوبہ کی 8 لاکھ ایکڑ اراضی سیراب ہوسکے گی جو دریائے سندھ سے ایک سو سے ڈیڑھ سو فٹ کی اونچائی پر ہے۔ اس کے لیے دریائے سندھ کی سطح بلند کرنا ضروری ہے جو صرف اور صرف کالا باغ ڈیم تعمیر کرنے سے ہو سکتی ہے۔