’’پاکستان بھارت کے مابین تجارتی حجم 25 ارب ڈالر تک بڑھایا جاسکتا ہے‘‘

اسلام آباد(اے پی پی)پاکستان  بھارت تاجر برادری کی مشترکہ کاوشوں سے دوطرفہ تجارت کے حجم کو 25 ارب ڈالر تک بڑھایا جا سکتا ہے ۔ بھارت کے جنوبی گجرات چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹری (ایس جی سی سی آئی) کے صدر ملیش نے کہا ہے کہ اس وقت پاک بھارت دوطرفہ تجارت حجم 2ارب ڈالر تک ہے جبکہ دونوں ممالک کی تاجر برادری کے روابطہ کے فروغ سے آئندہ دس سال کے دوران دو طرفہ تجارت کے حجم کو 25 ارب ڈالر تک بڑھایا جا سکتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ دوطرفہ تجارت میں اضافہ کیلئے تاجر برادری کے ساتھ ساتھ دونوں ممالک کی حکومتوں کو بھی کاوشیں کرنا ہونگی۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت دونوں ممالک کی زیادہ تر تجارت غیر روایتی طریقوں سے کی جا رہی ہے  جس کی وجہ سے تاجر برادری کے اخراجات میں اضافہ ہو تا ہے  جبکہ اس سے صارفین تک سستی مصنوعات بھی نہیں پہنچ پاتیں ۔ کا ملیش نے کہا کہ اگر دونوں ممالک کی حکومتیں براہ راست تجارت کے فروغ میں حائل رکاوٹوں کے خاتمہ کیلئے کردار ادا کریں تو دوطرفہ تجارت میں چند سالوں کے دوران نمایاں اضافہ کیا جا سکتا ہے ۔