ملک میں آلو، ٹماٹر کا مصنوعی بحران پیدا کیا گیا : سکندر حیات بوسن

ملک میں آلو، ٹماٹر کا مصنوعی  بحران پیدا کیا گیا : سکندر حیات بوسن

اسلام آباد(اے پی اے) وفاقی وزیر برائے قومی تحفظ خوراک سکندر حیات خان بوسن نے کہا ہے کہ ملک میں آلو اور ٹماٹر کا مصنوعی بحران پیدا کیا گیا ہے۔15 دسمبر کے بعد آلو وافر مقدار میں مارکیٹ میں پہنچ جائے گا اور کوئی خریدنے والا نہیں ہو گا، بھارت میں ڈیزل اور کھاد کے ریٹ پاکستان کی نسبت بہت کم ہیں، قیمتوں کے حوالے سے ہمارا بھارت سے کسی صورت مقابلہ نہیں، زراعت میں بہتری کے لیے ہمیں چھوٹے کسانوں کے لیے ہنگامی اقدامات کرنا ہوں گے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے نجی ٹی ی سے بات چیت کرتے ہوئے کیا ۔ہم ہمیشہ ہی اپنی ضرورت کا 50 فیصد ٹماٹر باہر سے درآمد کرتے ہیں لیکن اس دفعہ ٹرانسپورٹرز کی ہڑتال اور بھارت میں مذہبی تہوار کے باعث ٹماٹر پاکستان نہیں پہنچ سکا جس کی وجہ سے ٹماٹر نایاب ہو گیا لیکن ہمارا المیہ ہے کہ جو چیز مارکیٹ میں شارٹ ہو اس کا اتنا ہی زیادہ استعمال کیا جاتا ہے۔ایک سوال پر سکندر بوسن نے کہا کہ سابقہ حکومت کی کرپشن اور مس مینجمنٹ کے باعث بہت سے منافع بخش ادارے بھی تباہی کے دہانے پر پہنچ گئے۔