غزہ پر 1500 حملوں کے باوجود اہداف حاصل نہیں ہو سکے : اسرائیلی فوج


مقبوضہ بیت المقدس (ثناءنیوز) اسرائیلی فوج نے انکشاف کیا ہے کہ حال ہی میں غزہ کی پٹی پرمسلط کی گئی آٹھ روزہ جنگ کے دوران محصور شہر میں 1500فضائی حملے کئے گئے لیکن ان حملوں کے باوجود فوج اپنے اہداف حاصل کرنے میں ناکام رہی ہے۔مرکزاطلاعات فلسطین کے مطابق اسرائیلی فوج کے ایک ترجمان نے فرانسیسی خبررساں ادارے سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ایک ہفتہ قبل غزہ کی پٹی پر مسلط کی گئی جنگ میں شہر میں آٹھ دنوں کے دوران پندرہ سو اہداف پر بمباری کی گئی۔ صہیونی ترجمان نے کہا کہ فلسطینی مزاحمت کاروں کی جانب سے بھی اسرائیل میں بڑی تعداد میں راکٹ حملے کئے گئے ہیں۔ فلسطینیوں کی طرف سے 1466 راکٹ داغے گئے جن میں سے 908 راکٹ اپنے اہدف پرپہنچنے میں کامیاب ہوگئے جبکہ میزائل شکن نظام آئرن ڈوم کی مدد سے صرف 421 راکٹوں کو ہدف تک پہنچنے سے روکا گیا ہے۔ ترجمان نے بتایا کہ گذشتہ منگل اور بدھ کی درمیانی شب جب جنگ شدت اختیار کرچکی تھی غزہ کی پٹی سے داغے گئے 92 راکٹ یہودی کالونیوں میں گرے۔ قبل ازیں فلسطینیوں کی طرف سے 42 راکٹ داغے گئے تھے۔



دیگر خبریں

پرنٹ لائن

پرنٹ لائن

16 دسمبر 2017
پرنٹ لائن

پرنٹ لائن

15 دسمبر 2017
پرنٹ لائن

پرنٹ لائن

14 دسمبر 2017
پرنٹ لائن

پرنٹ لائن

13 دسمبر 2017