حکمران اور اتحادی انتخابات سے فرار کیلئے فضا خراب کر رہے ہیں:حافظ حسین احمد


لاہور (نیوز ڈیسک) جمعیت علمائے اسلام (ف) کے مرکزی رہنما حافظ حسین احمد نے کہا کہ حکمران اور ان کے اتحادی انتخابات سے فرار چاہتے ہیں اس لئے فضا کو جان بوجھ کر خراب کیا جا رہا ہے۔ کراچی سے شائع ہونے والے جریدے تکبیر کو انٹرویو دیتے ہوئے انہوں نے خبردار کیا کہ اگر نگران سیٹ اپ نہ آیا تو عدالتی سیٹ اپ آئے گا اور معاملات خراب ہوں گے۔ انہوں نے کہا حکمران اتحاد بعض قوتوں کو اکسا رہا ہے کہ وہ مداخلت کریں یہ انتہائی خطرناک ہو گا جب کہ دوسری جانب صورت یہ ہے کہ اس اندھے کنوئیں میں کوئی بھی اس وقت تک اترنے کو تیار نہیں جب تک اس سے زہریلی گیس کا اخراج نہ ہو جائے۔ حافظ حسین احمد نے کہا بلوچستان حکومت کے بارے میں فیصلہ ہو یا کراچی بدامنی کیس کا فیصلہ حکمران ان عدالتی فیصلوں پر عمل کرنے میں سنجیدہ نہیں انہوں نے کہا کہ بلوچستان میں جب تک طاقت کا استعمال بند نہیں کیا جاتا اور گولی کی بجائے بولی کے ذریعے مسئلہ کا حل تلاش کرنے کی سوچ پیدا نہیں ہوتی اس وقت تک صورتحال میں بہتری کا کوئی امکان نہیں۔ حافظ حسین احمد نے کہا امریکہ ملاعمر یا طالبان سے مذاکرات پر آمادہ ہے تاکہ جنگ ختم ہو اس کے برعکس ہم اپنے ہم وطنوں کو طاقت کے زور پر راہ راست پر لانے کےلئے بضد ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ایم ایم اے کی بحالی کا اعلان جے یو آئی نے نہیں کیا بلکہ اس میں شامل 5 جماعتوں نے اس کی بحالی کا اصولی فیصلہ کیا ہے۔