رواں مالی سال کے 8 ماہ میں ترسیلات زر اور برآمدات بڑھنے سے اخراجات جاریہ کا خسارہ کم ہوگیا

لاہور( کامرس رپورٹر) پاکستان کے اخراجات جاریہ کے کھاتے( کرنٹ اکاﺅنٹ) کے خسارے کا حجم رواں مالی سال کے ابتدائی 8ماہ( جولائی سے فروری) کے دوران9.8 کروڑ ڈالر رہا ہے جو گزشتہ مالی سال کی اسی مدت کے دوران اخراجات جاریہ کے مقابلے میں 2ارب 92کروڑ 90لاکھ ڈالر کم ہے۔ وزارت خزانہ کے ذرائع کے مطابق اخراجات جاریہ میں کمی کی بنیادی وجہ پاکستان میں درآمدات میں کمی اور برآمدات میں اضافے کے ساتھ ساتھ بیرون ملک پاکستانیوں کی جانب سے ترسیلات زر میں اضافہ ہے۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ رواں مالی سال کے ابتدائی 8ماہ میں پاکستان کا تجارتی خسارہ 7ارب 16کروڑ 30لاکھ ڈالر رہا جو گزشتہ مالی سال میں اتنی مدت کے مقابلے میں 40.1 کروڑ ڈالر کم ہے۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ رواں مالی سال فروری تک بیرون ملک پاکستانیوں نے ملک میں 6ارب 96کروڑ 30لاکھ ڈالر کی رقوم بجھوائیں جو گزشتہ مالی سال اتنی مدت کے مقابلے میں ایک ارب17کرو ڑ60لاکھ ڈالر زائد ہے۔