گلگت بلتستان اسمبلی: مسلم لیگ ن نے حاجی فدا محمد کو سپیکر، جعفر اللہ کو ڈپٹی نامزد کر دیا

گلگت (نامہ نگار+ نوائے وقت رپورٹ) گلگت بلتستان قانون ساز اسمبلی کی 6خواتین اور 3ٹیکنو کریٹس کی خصوصی نشستوں پر انتخابات مکمل ہو گئے۔ چیف الیکشن کمشنر جسٹس (ر) سید طاہر علی شاہ کے مطابق مسلم لیگ ن کو 4، ایم ڈبلیو ایم اور اسلامی تحریک کو ایک ایک سیٹ ملی جبکہ 3ٹیکنو کریٹس نشستوں میں سے مسلم لیگ ن کو دو اور اسلامی تحریک کو ایک سیٹ ملی۔ مسلم لیگ ن کی شرین اختر، نسرین بانو، رانی عتیقہ غضنفر اور ثوبیہ حسین مقدم کامیاب ہوئیں جبکہ بی بی سلیمہ ایم ڈبلیو اور ریحانہ عبادی اسلامی تحریک کی کامیاب قرار دی گئیں۔ ٹیکنو کریٹس کی سیٹوں پر اورنگ زیب خان اور میجر (ر) محمد امین مسلم لیگ ن سے اور کیپٹن (ر) محمد شفیع اسلامی تحریک کے کامیاب ہوئے۔ مسلم لیگ کو مجموعی طور پر 22نشستوں کی اکثریت حاصل ہو گئی۔ گلگت بلتستان کے نئے وزیراعلیٰ کے لئے مسلم لیگ ن کے حافظ حفیظ الرحمن کے نام کو فائنل کر دیا ہے۔ ذرائع کے مطابق 25جون کو سپیکر اور ڈپٹی سپیکر کا انتخاب عمل میں لانے کے بعد 26جون کو اسمبلی کا اجلاس طلب کیا جائے گا جس میں وزیراعظم محمد نوازشریف کی شرکت اور خطاب کی متوقع ہے۔ آج صوبائی اسمبلی کا پہلا اجلاس ہو گا جس میں ارکان اسمبلی حلف رکنیت کا حلف اٹھائینگے۔ مسلم لیگ ن نے گلگت بلتستان قانون ساز اسمبلی کیلئے سپیکر اور ڈپٹی سپیکر کے ناموں کا اعلان کر دیا۔ مسلم لیگ ن میڈیا سیل کے مطابق حاجی فدا محمد ناشاد سپیکر اور جعفر اللہ خان ڈپٹی سپیکر نامزد کر دئیے گئے۔