بےنظیر کے قاتل نہ پکڑنے پر مظاہرہ، بابر اعوان، رحمن ملک کی گرفتاری کا مطالبہ

لاہور (سٹاف رپورٹر) پیپلز پارٹی کے ناراض کارکنوں نے محترمہ بے نظیر بھٹو کے قاتلوں کی عدم گرفتاری کیخلاف گذشتہ روز مال روڈ کے چیئرنگ کراس پر احتجاجی مظاہرہ کیا۔اس موقع پر مظاہرین نے ناہید خان اور سینٹر صفدر عباسی کے حق میں نعرے بازی کی۔ مظاہرے میں شریک کارکنوں نے پیپلز پارٹی کے جھنڈے اور بڑے بڑے بینرز اٹھا رکھے تھے جن پر محترمہ بے نظیر بھٹو کے قاتلوں کوگرفتار کرنے اور قیادت کی بے حسی سے متعلق نعرے درج تھے۔کارکنوں نے ”بی بی ہم شرمندہ ہیں تیرے قاتل زندہ ہیں“ کے نعرے لگائے۔ مظاہرے کے باعث مال روڈ پر ٹریفک بلاک ہو گئی جس کی وجہ سے گزرنے والوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔ ناراض کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے حر بخاری اور دیگر رہنماوں نے مطالبہ کیا کہ بی بی شہید کے قتل کی تحقیقات کو شفاف بنانے کےلئے وفاقی وزیر قانون بابر اعوان اور وزیر داخلہ رحمن ملک کو گرفتار کیا جائے۔ انہوں نے کہاکہ محترمہ بے نظیر بھٹو کے قاتلوں کو لیاقت علی کے قاتلوں کی طرح نہیں چھوڑ دیا جائے گا۔ پاکستان کے 18 کروڑ عوام محترمہ کے وارث ہیں اور ہم محترمہ کے قاتلوںکی گرفتاری اور انہیں کیفر کردار تک پہنچائے جانے تک چین سے نہیں بیٹھیں گے۔ انہوں نے کہا کہ محترمہ کے قتل کیس میں محض پولیس افسران کی گرفتاری کافی نہیں اصل حقائق عوام کے سامنے لائے جائیں۔