عافیہ کو سزا ہوئی تو ذمہ دار صدر، وزیراعظم اور سیاستدان ہونگے: فوزیہ صدیقی

لاہور (اپنے نمائندے سے) امریکہ میں قید ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی بہن ڈاکٹر فوزیہ نے کہا ہے کہ اگر ڈاکٹر عافیہ کو سزا ہوئی تو ذمہ دار صدر، وزیراعظم، گورنر سلمان تاثیر، میاں نوازشریف، شہبازشریف، فضل الرحمن سمیت دیگر سیاستدان ہونگے صدر اور وزیراعظم کی ایک کال پران کی بہن کو ریلیف مل سکتا ہے وفاقی وزیر داخلہ رحمن ملک قوم سے جھوٹ بول رہے ہیں حقیقت یہ ہے کہ ڈاکٹر عافیہ کی رہائی کیلئے امریکہ کو خط نہیں لکھا گیا ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز تحریک انصاف لاہور کے مرکزی دفتر میں انصاف سٹوڈنٹس فیڈریشن کے عہدیداروں کے ہمراہ پریس کانفرنس اور پنجاب ےونیورسٹی اکیڈمک سٹاف ایسوسی ایشن کی جنرل باڈی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کےا۔ ڈاکٹر فوزیہ صدیقی نے الزام لگایا کہ سابق وزیراعظم نوازشریف نے بھی قوم کی بیٹی کیلئے کوئی کردار ادا نہیں کیا۔ کل 23 ستمبر کو لاہور اور کراچی پریس کلب سے امریکن قونصلیٹ کے دفاتر تک احتجاجی ریلیاں نکالی جائیں گی اور دھرنے دیئے جائیں گے۔ اوباما نے جان بوجھ کر ڈاکٹر عافیہ کی سزا کیلئے 23 ستمبر کا دن مقررکیا ہے کیونکہ اس دن وہ جنرل اسمبلی سے خطاب کر رہے ہیں۔جی این آئی کے مطابق ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی والدہ ڈاکٹر عصمت صدیقی کا کہنا ہے کہ عافیہ صدیقی کی رہائی کیلئے حکومت کے پاس چند گھنٹے ہیں۔ کراچی میں اپنی رہائش گاہ کے باہرمیڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے وزیراعظم یوسف گیلانی سے اپیل کی ہے کہ وہ امریکی صدر اوباما کو فون کرکے عافیہ کو رہائی دلوائیں۔