خسرہ نے 2کمسن بھائیوں سمیت مزید 5 بچوں کی جان لے لی

لاہور+ پیرمحل+ نوشہرہ (نیوز رپورٹر+ این این آئی+ نامہ نگار) ملک بھر میں خسرے سے ہلاکتوں کا سلسلہ گذشتہ روز بھی جاری رہا اور 2کمسن بھائیوں سمیت مزید 5بچے موت کے منہ میں چلے گئے۔ والدین میں تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے۔ میوہسپتال لاہور میں شاہدرہ کا رہائشی دو سالہ عمر یاسین خسرے کے باعث جان کی بازی ہار گیا۔ اپردیرکے علاقہ نہاگ درہ میں خسرے کی وبا سے نواب علی نامی شخص کے خاندان کے دو بچے 6 سالہ سنیال اور اس کا 4سالہ بھائی حمید جاں بحق ہوگئے جبکہ کزن سپنا، لبنیٰ اور سمن ہسپتال میں زیرعلاج ہیں۔ موذی مرض سے نوشہرہ کے علاقے بھی خسرہ سے متاثر ہوئے ہیں جہاں ایک ہی خاندان کے 9 بچے خسرے کی لپیٹ میں آ گئے جن میں سے چار سالہ علینہ جانبر نہ ہوسکی جبکہ 7 سالہ عبدالرحمان، 5 سالہ ولید احمد، ایک سالہ طیبہ پشاور کے ہسپتال میں زیرعلاج ہیں۔ مزید بتایا گیا ہے کہ چوبیس گھنٹوںکے دوران خسرے کے مزید 132 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں ۔دوسری طرف محکمہ صحت نے پولیو اور خسرے سے بچاﺅ کے لئے مہم میں علماءکرام کی خدمات بھی حاصل کر لی ہیں۔ پیرمحل سے نامہ نگار کے مطابق معروف مذہبی شخصیت مولانا مفتی شیراز احمد کا پانچ سالہ بیٹا معاذ شیراز مبینہ طور پر خسرہ کی بیماری کی وجہ سے زندگی کی بازی ہار گیا جس کی نماز جنازہ جامعہ العصر کے احاطہ میں مولانا عبدالمجید آف کہروڑپکا نے پڑھائی۔ بتایا گیا ہے کہ معاذ شیراز سات روز تک خسرہ کی بیماری میں مبتلا رہا۔ دریں اثنائخسرہ کی وبا نے پنجاب کے دیگر علاقوں کے بعد لاہور کو بھی لپیٹ میں لے لیا، چار ماہ کے دوران میوہسپتال میں27 جبکہ چلڈرن ہسپتال میں 30 متاثرہ بچے جاں بحق ہوئے۔ محکمہ صحت کی جانب سے خسرے سے متعلق مہم ابھی تک شروع نہیں کی جا سکی۔ محکمہ صحت پنجاب کی غفلت کہیں، یا خسرہ کی ویکسین کی عدم فراہمی ،لاہور میں خسرے کا عفریت قابو میں نہیں آ رہا،گذشتہ سال نومبر سے ہی خسرہ کے کیسز سامنے آنا شروع ہوگئے تھے، رواں سال چار ماہ کے دوران صرف دو ہسپتالوں میں57 بچے جاں بحق ہوئے۔ ڈی جی ہیلتھ پنجاب کے مطابق لاہور میں 28 بچے ہلاک ہوئے جبکہ میوہسپتال کے ایڈیشنل اے ایم ایس نے صرف اپنے ہسپتال میں 27 بچوں کی اموات کی تصدیق کی۔ متاثرہ بچوں کے والدین اپنے بچوں کے حوالے سے بہت پریشان ہیں ۔انہوں نے کہا ہے کہ حکومت وبا پر قابو پانے کیلئے آگاہی مہم چلائے، ٹیمیں تشکیل دی جائیں جو گھر گھر جا کر بچوں کو ویکسین پلائیں۔
خسرہ/ بچوں کی جان لے لی