اینٹی کرپشن نے متعدد افسروں اور اہلکاروں کو انتہائی مطلوب افراد میں شامل کر لیا


لاہور (رپورٹ: میاں علی افضل) کرپشن کے مقدمات درج ہونے کے باوجود شامل تفتیش نہ ہونے پر ایل ڈی اے، صحت، واسا، بورڈ آف ریونیو، لوکل کمشن، ٹی ایم اے، ڈاکٹر، ایجوکیشن کے ای ڈی او، محکمہ مال کے تحصیلداروں، نائب تحصیلداروں، گرداوروں، پٹواریوں و دیگر بڑے سرکاری افسران اور اہلکاروں کو اینٹی کرپشن نے انتہائی مطلوب افراد کی فہرست میں شامل کر دیا ہے۔ اینٹی کرپشن نے تحصیلدار، برحان الدین تحصیلدار، بشیر احمد نائب تحصیلدار، امیر حسین پٹواری ایل ڈی اے محمد یونس ایل ڈی اے کلرک، بورڈ آف ریونیو کے خالد افتخار، ملک آصف کمال، فضل ربانی، لوکل گورنمنٹ کے ایس ایم امجد، عرفان مظہر، چلڈرن ہسپتال کے ندیم عباس، محکمہ تعلیم کی ای ڈی او مجیدہ نیاز، ڈائریکٹر ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ واجد محمود سپرنٹنڈنٹ شاہد فاروق، اقبال محی الدین کلرک، رﺅف احمد لیبارٹری اٹینڈنٹ واسا کے سیف اللہ، ٹی ایم اے کے سب انجینئر ظہیر الدین بٹ، محکمہ صحت کے میو ہسپتال کے محمد ذوالفقار، ڈاکٹر حسین علی آر ایچ، محکمہ مال کے پٹواری شبیر احمد، پٹواری محمد ندیم، محمد سلیم پٹواری، سجاور پٹواری، عرفان پٹواری، افتخار احمد پٹواری، نیاز شاہ پٹواری، کفایت حسین پٹواری، نصراللہ پٹواری، رمضان پٹواری، طاہر محمود ریکارڈ کیپر، امیر علی پٹواری، مقصود احمد پٹواری، محمد اعظم پٹواری، ندیم شاہ پٹواری، محمد اسلم پٹواری، امین پٹواری، رفاقت علی پٹواری، انور پٹواری اور محمد سعید رجسٹری محرر کے خلاف مقدمات درج کئے ہیں۔ ان افراد کی گرفتاری کےلئے چھاپے مارنے کے مختلف ٹیمیں بھی بنائی جا رہی ہیں۔