فصیح بخاری کی تقرری سپریم کورٹ کی آبزرویشن کے منافی ہے‘رہنما مسلم لیگ (ن)

لاہور (خصوصی رپورٹر) مسلم لیگ (ن) کے سینئر رہنماﺅں نے ایڈمرل (ر) سید فصیح بخاری کی چیئرمین نیب کی حیثیت سے تقرری کو صدر آصف علی زرداری اور وزیراعظم یوسف رضا گیلانی کی ہٹ دھرمی قرار دیتے ہوئے اسے سپریم کورٹ کی وارننگ اور پارلیمنٹ میں کئے گئے مطالبات کے منافی قرار دیا ہے۔ مسلم لیگ (ن) کے رہنما و سینئر مشیر اعلی پنجاب سردار ذوالفقار علی خان کھوسہ نے سید فصیح بخاری کی تقرری کے نوٹیفکیشن کو سپریم کورٹ کی آبزرویشن اور وارننگ کے منافی قرار دیتے ہوئے کہا کہ احتساب کے ادارے کو یوں متنازع بنانا ملک کے ساتھ ظلم ہے۔ مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ صدر زرداری اور وزیراعظم جس انداز سے ملکی معاملات چلا رہے ہیں اس پر پوری قوم احتجاج کر رہی ہے۔ اچھی شہرت کے انسان کی غلط انداز میں تقرری نے اس شخص کے بارے میں سوالات اٹھا دئیے ہیں۔ مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما خواجہ محمود احمد نے کہا کہ صدر اور وزیراعظم کی ہٹ دھرمی نے ان کے خلاف احتجاج کی راہ ہموار کر دی ہے۔ ”گو زرداری گو“ احتجاج عوام کے دلوں کی آواز ہے۔ مسلم لیگ (ن) کے مرکزی جوائنٹ سیکرٹری خرم دستگیر خان نے کہا کہ فصیح بخاری کا نوٹیفکیشن جس انداز میں چھٹی کے روز جاری کیا گیا اس سے حکمرانوں کی غیر اخلاقی حرکات کا اندازہ کیا جا سکتا ہے۔ نیب جیسے ادارے کو متنازع بنا دیا گیا حالانکہ پوری قوم بلاامتیاز احتساب کے حق میں ہے۔ صوبائی وزیر قانون رانا ثناءاللہ نے کہا ہے کہ چیئرمین نیب کی تقرری پر کوئی اعتراض نہیں تقرری میں آئینی راستہ اختیار نہیں کیا گیا، زرداری ٹولہ ملک کیلئے سب سے بڑا خطرہ ہے۔ نوازشریف کا سندھ کے سیلاب زدہ علاقوں کا یہ پانچواں دورہ ہے۔ شرجیل میمن اور ان کی حکومت کراچی میں بیٹھے ہیں نواز شریف کا احتجاج عوام کا احتجاج ہے۔ انہوں نے عائشہ احد کے حوالے سے کہا کہ عائشہ احد کریمنل ریکارڈ رکھتی ہیں اور کریمنل ریکارڈ رکھنے والی خاتون کا مظلوم ظاہر کرنا درست بات نہیں۔