مقبوضہ کشمیر : جھڑپ میں مزید 3 مجاہد شہید‘ بھارتی میجر زخمی‘ مظاہرے جاری‘ متعدد گرفتار

شوپیان/ سرینگر (اے این این/ کے پی آئی) بھارتی فورسز اور مجاہدین کے درمیان جھڑپ میں 3مجاہدین شہید جبکہ ایک میجر زخمی‘2مکان تباہ ہوگئے۔ بھارتی مظالم کیخلاف مظاہروں کا سلسلہ جاری ہے۔ تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز چون کیلر کے مقام پر بھارتی فورسز اور مجاہدین کے درمیان تصادم آرائی میں راجوری کے 2 اور کیلر کا ایک مجاہد شہید جبکہ فوج کا ایک میجر زخمی اور 2 رہائشی مکان بھی تباہ ہوئے۔ تصادم آرائی ختم ہونے کے بعد وہاں مظاہرین اور فورسز کے درمیان شدید جھڑپیں ہوئیں۔ ادھر مقبوضہ کشمےر مےں نوجوانوں کیخلاف کریک ڈاون کا سلسلہ جاری رکھتے ہوئے بھارتی فوج اور پولیس نے سرینگر اور پانپور میں نصف درجن افراد کو گرفتار کر لےا جبکہ ترہگام کپوارہ میں پولیس نے پتھراو کے الزام میں 15 نوجوانوں کے والدین کوحراست میں لیا۔ اس دوران 4 روز قبل گرفتار کئے گئے کاکہ پورہ کے ایک طالبعلم کو سینٹرل جیل سرینگر منتقل کردیا گیا۔ مقبوضہ کشمےر ہائیکورٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر میاں عبدالقیوم اور جنرل سیکرٹری جی این شاہین کی مسلسل نظر بندی کے خلاف مقبوضہ کشمےر کے وکلاءنے صدر کورٹ سرینگر کے احاطے زبردست مظاہرہ کیا۔ وکلاءاور پولیس کے درمیان ہاتھا پائی بھی ہوئی۔ وکلاءکی ہڑتال کے100دن مکمل ہونے کے بعد بار ایسوسی ایشن نے اپنے طویل احتجاج میں مزید جان ڈالنے کیلئے احتجاجی مظاہروں اور دھرنوں کا سلسلہ تیزکردےا ہے۔ نادی ہل رفیع آباد میں بھارتی فوج کی جانب سے شہریوں پر بلا اشتعال فائرنگ کے الزام مےں پولیس نے بھارتی فوج کے اہلکاروں کیخلاف اقدام قتل کا کیس رجسٹر کرلیا ہے۔