مسئلہ کشمیر کو سارک کانفرنس کے آئندہ ایجنڈے میں شامل کیا جائے‘ انسانی حقوق کمیٹی کا مطالبہ

اسلام آباد (ثناءنیوز + آن لائن) پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں سینٹ اور قومی اسمبلی کی مجالس قائمہ برائے انسانی حقوق کے چیئرمینوں ریاض فتیانہ، سینیٹر افراسیاب خٹک، وزیر اعظم آزادکشمیر سردار عتیق احمد خان اور دونوں بڑی جماعتوں کے ارکان نے مطالبہ کیا ہے کہ مسئلہ کشمیر کو سارک کانفرنس کے آئندہ ایجنڈے میں شامل اور دوطرفہ بات چیت کو سہ فریقی مذاکرات میں تبدیل کیا جائے۔ انسانی حقوق کی مشترکہ کمیٹی نے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی بگڑتی ہوئی صورتحال پر اجلاس میں قرارداد منظور کی ہے جس میں اقوام متحدہ‘ یورپی یونین‘ او آئی سی اور تمام بین الاقوامی تنظیموں سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کے ہاتھوں میں ہونے والے ظلم و تشدد کے روکنے کے لئے اپنا کردار ادا کریں۔ گذشتہ روز پارلیمنٹ ہاﺅس میں منعقدہ اجلاس کو آگاہ کیا گیا کہ 1989ءسے جون 2010ءتک مقبوضہ کشمیر میں 93 ہزار 47 شہادتیں ہوئیں۔ ان میں 6975 کشمیریوں کو دوران حراست شہید کیا گیا۔ اس عرصہ میں ایک لاکھ 18 ہزار 424 کشمیریوں کو گرفتار کیا گیا جن میں بیشتر کو ٹارچر سیلوں میں انسانیت سوز مظالم اور تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔ بھارتی افواج کی جانب سے ایک لاکھ 5 ہزار 87 مکانات تباہ کر دئیے گئے ہیں۔ بھارتی افواج کے مظالم کی وجہ سے ایک لاکھ 7 ہزار 382 بچے یتیم، 22 ہزار 742 خواتین بیوہ ہو چکی ہیں۔ 9962 خواتین کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا گیا۔ چیئرمین قائمہ کمیٹی ریاض فتیانہ نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں سول نافرمانی اور کشمیر چھوڑو کی تحریک جاری ہے۔ ہتھیاروں کے بجائے نہتے عوام پرامن ذرائع سے سڑکوں پر بڑے پیمانے پر جدوجہد شروع کر چکے ہیں۔ احتجاج کے لئے صرف پتھر کا سہارا لیا جا رہا ہے۔ مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور کمیٹی کے رکن کیپٹن (ر) محمد صفدر نے کہا کہ مسئلہ کشمیر کے حل میں رکاوٹ بننے والی کالی بھیڑوں کے خلاف کارروائی کی جائے۔ پیپلز پارٹی کی خاتون رکن شکیلہ خانم اور دیگر نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کو پاکستان کو ہر فورم پر اٹھانا چاہئے۔ ہیومن رائٹس کمشن آف پاکستان کی نمائندہ طاہرہ عبداللہ نے کہا کہ مسئلہ کشمیر کے حوالے سے خارجہ امور کشمیر، انسانی حقوق کی وزارتوں اور ہیومن رائٹس کمشن کو مل کر کام کرنا چاہئے۔ عوامی نیشنل پارٹی کے رہنما سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے انسانی حقوق کے چیئرمین سینیٹر افراسیاب خٹک نے کہا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں اقوام متحدہ، عالمی کنونشنز اور ضابطوں کی کھلی خلاف ورزی کر رہا ہے۔ وزیراعظم آزاد کشمیر سردار عتیق احمد خان نے انسانی حقوق کمیٹی کے ارکان کو دورہ آزاد کشمیر کی دعوت دی اور کہا کہ آزاد خطے کے عوام پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں کی متفقہ قرارداد پر مشکور ہیں۔