بھارت کے سب سے بڑے جوہری بجلی گھر نے کام شروع کر دیا، منصوبے کے خلاف احتجاج، بچوں اور خواتین کی بھی شرکت

نئی دہلی (اے ایف پی + آن لائن) بھارت میں پرتشدد مظاہروں اور کئی بار کے التواءکے بعد بالآخر ملک کے سب سے بڑے جوہری بجلی گھر نے کام کرنا شروع کر دیا ہے۔ کوڈنکلم نیوکلیئر پاور پلانٹ روس کے تعاون سے تیار ہوا ہے اور یہ نیشنل گرڈ میں ایک ہزار میگا واٹ کا اضافہ کر سکے گا۔ سابق بھارتی وزیراعظم راجیو گاندھی اور سابق سوویت صدر میخائیل گورباچوف نے 1988ء میں اس پلانٹ کے قیام کے منصوبے پر دستخط کئے تھے۔ مقامی ذرائع ابلاغ کے مطابق منصوبے پر قریباً تین ارب امریکی ڈالر لاگت آئی ہے۔ ادھر منصوبے کے خلاف ہزاروں افراد نے لیٹ کر احتجاج کیا۔ ان میں بچے اور خواتین بھی شامل تھیں۔