بش پر میرے دبائو ڈالنے کے بعد امریکہ نے اقوام متحدہ میں اسرائیلی جارحیت کیخلاف پہلی قرارداد کی مخالفت کی تھی: ایہود اولمرٹ کا انکشاف

بش پر میرے دبائو ڈالنے کے بعد امریکہ نے اقوام متحدہ میں اسرائیلی جارحیت کیخلاف پہلی قرارداد کی مخالفت کی تھی: ایہود اولمرٹ کا انکشاف

مقبوضہ بیت المقدس (مانیٹرنگ ڈیسک) اسرائیلی وزیراعظم ایہود اولمرٹ نے انکشاف کیا ہے کہ امریکی صدر جارج بش نے ان کے دبائو پر اقوام متحدہ میں اسرائیلی جارحیت کے خلاف پہلی قراراداد ویٹو کرائی تھی۔ ایک نجی ٹی وی کے مطابق امریکی وزیر خارجہ کنڈولیزا رائس غزہ میں مکمل جنگ بندی چاہتی تھی اور اس مقصد کیلئے انہوں نے اقوام متحدہ میں قرارداد پیش کی تھی تاہم میں نے صدر بش جو اس وقت فلاڈیلفیا میں ایک تقریب سے خطاب کررہے تھے کو فون کیا۔ صدر بش نے میر افون آنے پر خطاب ادھورا چھوڑ دیا اور مجھ سے بات کی۔ میں نے ان پر دبائو ڈالا کہ امریکہ غزہ پر اسرائیلی حملوں کی مذمت اور جنگ بندی کیلئے اقوام متحدہ میں پیش ہونے والی قرارداد کی حمایت نہ کرے جس پر صدر بش نے عمل کیا۔ ایہود اولمرٹ کے مطابق اپنی تیار کردہ قرارداد کے حق میں ووٹ نہ ڈال کر کنڈولیزا رائس خاص شرمندہ نظر آرہی تھی۔