مہنگائی‘ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کیخلاف سیاسی جماعتوں کے مظاہرے

لاہور + کوئٹہ (خصوصی رپورٹر + خصوصی نامہ نگار + آن لائن) مہنگائی‘ بیروزگاری‘ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے اور لوڈشیڈنگ کیخلاف متعدد سیاسی جماعتوں نے مظاہرے کئے۔ لاہور پریس کلب کے باہر خاکسار تحریک‘ جمعیت علمائے پاکستان (نفاذ شریعت) سنی تحریک‘ پاکستان بچاﺅ پارٹی‘ اسلامی تحریک طلباءنے مظاہرے کئے اور نعرے بازی کی۔ گزشتہ روز پٹرول‘ ڈیزل اور مٹی کے تیل کی مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے قائد خاکسار تحریک ڈاکٹر صبیحہ مشرقی نے کہا کہ مہنگائی کی ایک اور تباہ کن لہر شروع ہو گئی جو ثابت کرتی ہے کہ معیشت دن بدن انحطاط کی طرف جا رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ بجلی کی لوڈشیڈنگ حکمرانوں کی ناقص منصوبہ بندیوں کا نتیجہ ہے۔ اعظم بٹ‘ ذوالفقار نقشبندی‘ علامہ ممتاز اعوان‘ ضیغم مشرقی‘ رانا ایوب‘ طاہر اقبال خان‘ حاجی نذیر‘ صادق جٹ‘ شوکت جٹ‘ شیخ اشرف‘ مصطفی جٹ‘ رانا عبدالجبار‘ گوہر علی اور دیگر نے شرکت کی۔ لاہور پریس کلب کے سامنے جے یو پی کے سربراہ انجنیئر سلیم اللہ خان کی قیادت میں احتجاجی مظاہرہ ہوا۔ انجینےر سلیم اللہ نے کہا کہ ملک میں اسلامی نظام کے نفاذ کو یقینی بنایا جائے حکومت پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کیا گیا اضافہ فی الفور واپس لے نہیں تو عوام اس فیصلے کے خلاف سڑکوں پر آنے پر مجبور ہو جائیں گے ۔ تحریک تحفظ حقوق اہلسنت‘ سنی تحریک،پاکستان بچاو¿ پارٹی،اسلامی تحریک طلباءکے زیر اہتمام بھی لوڈ شیدنگ ‘مہنگائی بے روز گاری اور پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کے خلاف لاہور پر ےس کلب کے باہر الگ الگ احتجاجی مظاہرے ۔ آن لائن کے مطابق تحریک انصاف بلوچستان کے زیر اہتمام بھی پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا گیا جس سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے کہا کہ تحریک انصاف مہنگائی‘ بے روزگاری اور لوڈشیڈنگ کے خلاف اپنی جدوجہد جاری رکھے گی اور حکمرانوں کے جھوٹے وعدے عوام کے سامنے لائے گی۔