مارشل لاء کا دروازہ اب بھی کھلا ہے: پیر پگاڑا‘ شیخ رشید کی ملاقات

کراچی (آن لائن+ ریڈیو نیوز) مسلم لیگ فنکشنل کے سربراہ پیر پگاڑا نے کہا ہے کہ مارشل لاء کا دروازہ اب بھی کھلاہے‘ حکمرانوں نے ماضی سے سبق نہ سیکھا تو ایک اور ڈکٹیٹر آسکتا ہے‘ جنرل اشفاق پرویز کیانی مستقبل روشن کرنا چاہیں تو صدر بن سکتے ہیں‘ پرویز مشرف کے مستقبل کے بارے میں ان کا ہاتھ دیکھ کر بتا سکتا ہوں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گذشتہ روز کراچی میں مسلم لیگ عوامی کے سربراہ شیخ رشید احمد سے ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ پیر پگاڑا نے مزید کہا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے کا احترام کرتے ہیں تاہم ججز ایک طرف دیکھ کر فیصلے کرتے ہیں لیکن سیاستدانوں کی نظریں وہاں بھی ہوتی ہیں جہاں ججز نہیں دیکھ سکتے ایسے فیصلوں سے مارشل لاء کے دروازے بند نہیں ہوسکتے۔ سپریم کورٹ کے موجودہ فیصلے سے جو ہوگا وہ ہم نے سوچا بھی نہ ہوگا۔ ایک سوال پر انہوں نے کہا کہ پیپلزپارٹی اور ایم کیو ایم کے راستے جدا ہوچکے ہیں۔ اس موقع پر شیخ رشید احمد نے کہا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے کا احترام کرتے ہیں تاہم سپریم کورٹ کو 12 اکتوبر 1999ء لال مسجد‘ لاپتہ افراد اور ڈکٹر عبدالقدیرخان کے مسئلے کو بھی دیکھنا چاہیے کیونکہ سب کی نظریں سپریم کورٹ کی طرف ہیں۔ عدلیہ‘ مقننہ‘ حکمران‘ بیورو کریٹس‘ فوج اور عوام بند گلی میں کھڑے ہیں اور باہر نکلنے کا کوئی راستہ نظر نہیں آتا۔آن لائن کے مطابق پیرپگاڑا نے کہا ہے کہ پرویز مشرف کے مستقبل کا علم نہیں تاہم انہوں نے شیخ رشید کو مشورہ دیا کہ وہ بچ کر رہیں۔