مرسی کے حامیوں کا قتل عام انتہائی قابل مذمت ہے:پروفیسر ساجد میر

لاہور (خصوصی نامہ نگار)مرکزی جمعیت اہل حدیث کے سربراہ سینیٹر پروفیسر ساجد میرنے مصرمیں فوج کی طرف سے مرسی کے حامیوں پر اندھا دھند فائرنگ کے نتیجے میں درجنوں افراد کی شہادت کے واقعات کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔ اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ امریکہ نے اسلامی دنیا میں ہمیشہ آمریت کو پروان چڑھایا اور فوجی و نام نہاد جمہوری آمروں کی سرپرستی کی ہے۔ امریکہ اسلام کی طرف بڑھتے ہوئے قدموں کو روکنا چاہتا ہے عرب قیادتوں کو نوشتہ دیوار پڑھ کر اپنی صفیں اور قبلہ درست کرنا ہو گا۔ اور انہیں امریکی و اسرائیلی مشترکہ عزائم کو ناکام بنانے کی بلا تاخیر منصوبہ بندی کرنا ہوگی۔ امریکہ اور اسرائیل مصر میں کوئی ایسی حکومت برداشت نہیں کرسکتے جو قبلہ اول کو آزاد کرانے پر ایمان رکھتی ہو۔ مصری فوج اپنے ملک کو سول وار کی کھائی میں دھکیلنے کے امریکی ایجنڈے کی تکمیل چاہتی ہے۔ امریکہ نے اس سے قبل عراق، لیبیا، شام کو خانہ جنگی کے دہانے پر پہنچا دیا اور اب وہ مصر میں آلہ کاروں کے ذریعے کشت و خوں کا تھیٹر سٹیج کر رہا ہے۔