داتا گنج بخش ٹائون میں غیر قانونی کثیرالمنزلہ کمرشل تعمرات کی بھر مار

لاہور (سید شعیب الدین سے) داتا گنج بخش ٹائون میں غیر قانونی تعمیرات کی بھر مار ہوگئی ہے۔ شاہراہ قائدعظم، حمید نظامی روڈ، مزنگ روڈ، اردو بازار، ریلوے روڈ، ہال روڈ، انار کلی سمیت دیگر علاقوں میں غیر قانونی کثیرالمنزلہ کمرشل تعمیرات کی بھرمار ہوگئی ہے۔ شاہراہ قائداعظم پر گزشتہ دنوں وین گارڈ (کتابوں کی دکان) کی جگہ کمرشل 4منزلہ پلازہ بن چکا ہے جس میں سینکڑوں دکانیں ہیں۔ اسی کے ساتھ ملحقہ مارکیٹ کے اوپر چند سال پہلے 82 دکانوں کی غیر قانونی تعمیر ہوچکی ہے۔ وین گارڈ سے پہلے اور سٹیٹ بنکے کے سامنے برائٹ ڈرائی کلین کے ساتھ اندر جانے والی گلی میں 6 کثیرالمنزلہ کمرشل غیر قانونی تعمیرات مکمل کی جا رہی ہیں۔ جن میں سینکڑوں دکانیں بنائی گئی ہیں۔ مزنگ روڈ پر صفانوالہ چوک سے پہلے پرانے مکان کو گرائے بغیر پرانی دیواروں کے اندر نئی تعمیر شروع ہوچکی ہے۔ شارع حمید نظامی پر ماما کباب فروش کے سامنے پرانی رہائشگاہ کی جگہ تیسری منزل تک تعمیر پہنچ گئی ہے۔ اردو بازار میں کبیر سٹریٹ کے پرانے غیر قانونی پلازے کے اوپر 150 سے زائد غیر قانونی دکانیں بنائی جارہی ہیں۔ ہال روڈ پر چھوٹی بڑی کئی غیر قانونی تعمیرات جاری ہیں۔ ریلوے روڈ پر بھی 5 تعمیرات تیزی سے مکمل کی جا رہی ہیں۔